کے ایس ریلیف کی پاکستان کے سیلاب سے متأثرہ گوادر شہر کے لیے 873 ٹن خوراک کی ترسیل

9,000 غذائی پیکج بلوچستان میں سیلاب سے متأثرہ خاندانوں کو ایک ماہ تک سہارا دیں گے

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
4 منٹس read

شاہ سلمان انسانی امدادی مرکز (کے ایس ریلیف) نے اتوار کے روز پاکستان کے جنوب مغربی بندرگاہی شہر گوادر کے لیے 873 ٹن ضروری اشیائے خوردونوش روانہ کیں جہاں گذشتہ ماہ ہونے والی شدید بارشوں سے سیلاب آ گیا تھا۔ اس سے کئی مکانات بہہ گئے تھے اور بنیادی ڈھانچے کو نقصان پہنچا تھا۔

26 فروری سے شروع ہونے والی موسلادھار بارشوں کے بعد گہرے سمندر کے بندرگاہی شہر کے ساتھ ساتھ صوبہ بلوچستان کے خاران اور کیچ کے اضلاع میں گلیاں اور محلے سیلابی پانی میں ڈوب گئے جس سے تقریباً ایک سو گھر تباہ ہو گئے اور حکام کو مجبوراً ہزاروں پھنسے ہوئے لوگوں کو بچانے کے لیے کارروائی شروع کرنا پڑی۔ شہری صوبے میں بارشوں اور برفباری کے مختلف واقعات میں کم از کم پانچ افراد ہلاک ہو گئے جس کی بنا پر وزیرِ اعظم شہباز شریف نے متأثرین کے لیے 20 لاکھ روپے تک کے معاوضے کا اعلان کرنے کی غرض سے اس ہفتے شہر کا دورہ کیا۔

امدادی تنظیم کی طرف سے ایک پریس ریلیز میں کہا گیا ہے کہ "شاہ سلمان انسانی امدادی مرکز (کے ایس ریلیف) نے فوری طور پر 873 ٹن ضروری غذائی سامان کے ساتھ ہنگامی امدادی قافلہ تعینات کیا ہے۔"

"اس قافلے کا مقصد سیلاب سے متأثرہ آبادی کی فوری ضروریات کو پورا کرنا ہے۔"

کے ایس ریلیف نے کہا کہ اس نے 9,000 غذائی پیکج بھیجے ہیں جو ایک ماہ تک خاندانوں کو سہارا دیں گے۔ 97 کلوگرام وزن والا ہر پیکج کھانے کی اشیاء پر مشتمل ہے جیسے کہ 80 کلو آٹا، پانچ لیٹر کوکنگ آئل، 5 کلو چینی، 5 کلو چنے، اور 2 کلو کھجور۔

کے ایس ریلیف نے کہا، "یہ اشیاء بلوچستان کے گوادر ضلع میں مقیم سیلاب متأثرین کی براہِ راست مدد کریں گی۔

انسانی ہمدردی کی سعودی تنظیم نے کہا کہ وہ نیشنل ڈیزاسٹر مینجمنٹ اتھارٹی (این ڈی ایم اے) اور حکومتِ بلوچستان کے ساتھ مل کر 63,000 سے زیادہ ضرورت مند افراد کو کھانے کے تھیلوں کی "مؤثر تقسیم" کو یقینی بنائے گی۔

"خوراک کی امداد کے علاوہ یہ 9,000 غیر غذائی شیلٹر کٹس (315 ٹن) بھی فراہم کر رہا ہے جن میں خیمہ جات، سولر پینلز، کمبل، پلاسٹک کی چٹائیاں، کچن سیٹ، پانی کا کولر، اور جراثیم کُش صابن سمیت ضروری امدادی اشیاء پیش کی جا رہی ہیں۔"

کے ایس ریلیف نے کہا کہ جامع مدد مزید 63,000 افراد کو امداد فراہم کرے گی جو بحران کے دوران اہم ریلیف دے گی۔

کے ایس ریلیف نے کہا، "یہ اقدام سعودی عرب کی انسانی ہمدردی کی کوششوں کے عزم کی نشاندہی کرتا ہے جیسا کہ شاہ سلمان انسانی امدادی مرکز نے سہولت فراہم کی ہے۔"

اسلام آباد میں اشیائے خوردونوش بھیجنے کی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے وزیرِ اعلیٰ بلوچستان سرفراز بگٹی نے گوادر میں سیلاب سے متأثرہ افراد کی مدد کے لیے آنے پر سعودی عرب کا شکریہ ادا کیا۔

بگٹی نے صحافیوں کو بتایا کہ "میں اس مشکل وقت میں ان تمام لوگوں کا شکریہ ادا کرنا چاہتا ہوں جنہوں نے ہمارے بھائیوں کا خیال رکھا اور بلوچستان کے لوگوں کی مدد کی۔ وفاقی حکومت نے ایک ہفتے کے اندر لوگوں کو معاوضے کی ادائیگی شروع کردی ہے جس کا کہا گیا تھا۔"

انہوں نے کہا کہ بلوچستان میں نئی حکومت عوام کو بہترین طرزِ حکمرانی فراہم کرتے ہوئے صوبے کو درپیش مختلف چیلنجز سے نمٹے گی۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں