امریکا: 47 سال پرانے "مون شُوز" کی قیمتِ فروخت 50 ہزار ڈالر!

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

کیا کوئی اس بات کا یقین کر سکتا ہے کہ 1972 کی اولمپک میراتھن کے ٹرائل میں استعمال ہونے والے جوتوں کی جوڑی 50 ہزار ڈالر کی رقم میں فروخت ہوئی ؟

امریکا کے شہر ساکرامینٹو سے تعلق رکھنے والے ڈیو رسل نے KTXL tv کو بتایا کہ انہوں نے NIKE کمپنی کے ہاتھوں سے بنے جوتوں کی اس جوڑی کو گذشتہ ماہ امریکا کے شہر یوجین اوریگون میں ہوٹلوں کی ایک چین کو فروخت کیا۔ یہ چین NIKE کی مصنوعات کی حوالے سے ایک پراپرٹی تعمیر کر رہی ہے۔

رسل کے مطابق جب انہوں نے یوجین شہر سے میراتھن کے ٹرائل کے لیے کوالیفائی کیا تو اُن کی عمر 25 سال تھی۔ اس سال یہ جوتے اور NIKE کمپنی کا برانڈ پہلی مرتبہ منظر عام پر آئے تھے۔

یہ جوتے Waffle سے ملتی جلتی شکل کے تلوے کے سبب "moon shoes" کے نام سے جانے جاتے تھے۔

کمپنی نے اس جوتے کی صرف 12 جوڑیاں تیار کی تھیں۔

انگریزی ویب سائٹ Letsrun.com کے مطابق ڈیو رسل نے اس میراتھن ٹرائل میں 55 ویں پوزیشن حاصل کی تھی۔ یہ ٹرائل ریس فرینگ شورٹر نے جیتی تھی جنہوں نے 1972 کے میونخ اولمپک کھیلوں کی میراتھن دوڑ میں بھی فتح کا تاج اپنے سر پر سجایا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں