شاہ فیصل عالمی ایوارڈ حاصل کرنے والے نمایاں نام کن لوگوں کے ہیں؟

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
3 منٹس read

شاہ فیصل ایوارڈ برائے 2020 اور 2021 کی تقریب خادم حرمین شریفین شاہ سلمان بن عبدالعزیز کی سرپرستی میں منعقد ہوئی۔ قائم مقام گورنر ریاض شہزادہ محمد بن عبدالرحمان بن عبدالعزیز کی موجودگی میں شہزادہ خالد الفیصل نے استقبالیہ خطاب کیا۔

تفصیلات کے مطابق شاہ فیصل عالمی ایوارڈ کے سیکریٹری جنرل ڈاکٹر عبدالعزیز السبیل نے ایوارڈ یافتگان کا تعارف کرایا۔

خدمت اسلام ایوارڈ 2020 منشور مکہ مکرمہ کو پیش کیا گیا۔ یہ تہذیبوں اور مذاہب کے پیرو کاروں کے درمیان امن وسلامتی اور بقائے باہمی کی اقدار راسخ کرنے کے لیے تاریخی آئین کا درجہ رکھتا ہے۔

اسلامی خدمات ایوارڈ 2021 صخر کمپنی کے بانی اور سربراہ محمد بن عبدالرحمان الشارخ کو دیا گیا۔ انہوں نے جدید ٹکنالوجی کی مدد سے اسلامی ورثے کے تحفظ کے سلسلے میں نیا اور اچھوتا کام انجام دیا ہے۔

القدس کا اسلامی ورثہ

اسلامک سٹڈیز ایوارڈ برائے 2020 ڈاکٹر محمد ہاشم غوشہ کو دیا گیا انہوں نے القدس کے اسلامی ورثے پر 150 سے زیادہ مقالات لکھے ہیں۔ انہوں نے القدس پر مختلف حوالوں سے 37 کتابیں تصنیف کی ہیں۔ انہوں نے انگریزی میں فلسطین انسائیکلوپیڈیا تیار کیا۔

اسلامک سٹڈیز ایوارڈ برائے 2021 کسی کو نہیں دیا گیا۔ اس کے لیے اسلام کا نظام وقف موضوع کے لیے مقرر تھا۔ اس پر ایوارڈ دینے کے قابل کوئی تحریر ریکارڈ پر نہیں لائی گئی تھی۔

عرب لینگوسٹک اسٹڈیز

عربی زبان و ادب کا ایوارڈ 2020 کے لیے آسٹریلیا کے پروفیسر مائیکل کاٹر کو دیا گیا، وہ نصف صدی سے عربی نحو پر غیر معمولی کام کررہے ہیں۔ انہوں نے عربی دنیا سے باہر لسانیاتی تحقیق کے لیے حوالہ جاتی تحریریں پیش کی ہیں۔

عربی زبان و ادب ایوارڈ برائے 2021 مراکش میں عبدالمالک السعدی یونیورسٹی کے پروفیسر ڈاکٹر محمد مشبال کو دیا گیا۔ وہ جدید بلاغت کے موضوع پر سند کا درجہ پا چکے ہیں۔

خون کی بیماریوں پر تحقیق

میڈیسن ایوارڈ برائے 2020 ڈاکٹڈر سٹیورٹ آرکن کو دیا گیا۔ وہ ہیمو گلوبین کی بیماریوں کے مثالی سکاٹر مانے جاتے ہیں۔ وہ ہارورڈ یونیورسٹی کی فیکلٹی میڈیسن میں بچوں کی میڈیسن کی چیئرڈیوڈ جوناتھن کے پروفیسر ہیں۔ وہ خون کے موروثی امراض پر اتھارٹی کا درجہ رکھتے ہیں۔

میڈیسن ایوارڈ برائے 2021 دو سکالرز کے حصے میں آیا۔ پروفیسر رابن جیمز فریکلین روز اور ڈاکٹر سٹیون مارک کو دیا گیا۔ الاول الذکر کیمبرج انسٹی ٹیوٹ اور ثانی الذکر یییل یونیورسٹی میں پروفیسر ہیں۔

علم حیاتیات پر سائنس ایوارڈ

سائنس ایوارڈ برائے 2020 بیجنگ کے حیاتیاتی سائنس انسٹی ٹیوٹ کے ڈائریکٹر پروفیسر چیاؤ ڈونگ وانگ اور جرمنی کے میک بلینک انسٹی ٹیوٹ کے ڈائریکٹر پروفیسر اسٹیوارڈ بارکن کو دیا گیا۔

یاد رہے کہ کنگ فیصل ایوارڈز 1979 سے 43 ممالک بشمول پاکستان کی 275 نابغہ روزگار شخصیات کو دیے جا چکے ہیں۔

یہ ایوارڈ اسلام، مسلمانوں اور بنی نوع انساں کی بے لوث خدمت کرنے والوں اور سائنس، طب، اسلامیاب اور عربی زبان وادب میں امتیازی کام کرنے والی شخصیات کو دیا جاتا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں