تصویر کو قریب سے دیکھیں، کیا آپ کو اسٹرابیری سرخ دکھتی ہے یا سرمئی رنگ کی؟

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

کوئی بھی اسے عام طور پر ہمارے ذہنوں میں فکسڈ یا بدیہی نہیں سمجھ سکتا۔ مثلاً یہ پوچھنے سے کہ ’’اسٹرابیری‘‘کا رنگ کیا ہے۔ اس لیے کہ ہمارے دماغوں میں اسٹرابری کا رنگ سرخ متعین ہے اور دماغ اس کے برعکس اسٹرابری کا کوئی دوسرا رنگ قبول نہیں کرے گا۔

تاہم سوشل میڈیا پر پھیلائی گئی ایک تصویر نے تصورات کو الٹا کر دیا کیونکہ پھل سرمئی نظر آ رہا ہے!

تفصیلات میں گرے اسٹرابیری سے ڈھکی کینڈی بار کی تصویر وائرل ہے جس نے برسوں پہلے پھیلے لباس سے ملتے جلتے تبصروں کا دروازہ کھول دیا اور اس کے رنگ کا راز برقرار رہا کہ یہ نیلا ہے یا سنہرا۔

رنگوں کے تجزیے سے کیا پتہ چلا؟

اسی حوالے سے لوگوں کے ملے جلے تبصرے آ رہے ہیں۔ یہ معلوم کرنے کے لیے کہ رنگ کا تجزیہ بتاتا ہے کہ آنکھیں کیا نہیں کرتیں۔

اس تصویر کے تجزیے سے پتہ چلتا ہے کہ اسٹرابیری کا رنگ خاکستری ہے، لیکن ہم اسے سرخ کے طور پر دیکھتے ہیں۔

اس رجحان کو "chromatic constantcy" کے نام سے جانا جاتا ہے اور اس کی وضاحت کی گئی ہے کہ انسانی ذہن کسی خاص چیز کے رنگوں کو قبول کرتا ہے اور روشنی کے حالات تبدیل ہونے کے باوجود تصویر مستحکم رہتی ہے۔

اس طرح یہ نظریہ اشیاء کی شناخت میں مدد کرتا ہے، چاہے حالات کچھ بھی ہوں۔

دماغ ایک ہی رہتا ہے

قابل ذکر ہے کہ یہ تصویر پہلی بار جاپانی ماہر نفسیات ’اکیوشی کیتاوکا‘ نے شائع کی تھی اور اس نے کبھی بھی سرخ رنگ کا استعمال نہیں کیا تھا بلکہ سرمئی سبز رنگ کا استعمال کیا تھا۔ اس کے باوجود انسانی ذہن اسٹرابیری کے رنگ کو سرخ ہی دیکھتا ہے۔

جبکہ تصویر کے مقصد کی سچائی کو ثابت کرنا ہے کہ اسٹرابیری کی موجودگی دماغ میں سرخ رنگ کی بصارت کو خود بخود بڑھا دیتی ہے، چاہے اس کا اصلی رنگ ہی کیوں نہ ہو لیکن اگر ہم اسٹرابیری کو کسی اور پھل سے بدل دیں تو کیا ہوگا؟

اس طرح رنگین استحکام اور نظری وہم کے نظریہ کے درمیان جوابات اور تجزیے مختلف ہوں گے۔ بہت سے تجزیے ہوں اور ذہن ایک ہی رہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں