.

سعودی عرب کی وزارت حج کے دو ڈائریکٹر برطرف، غفلت برتنے پر تحقیقات

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سعودی عرب کےوزیر حج وعمرہ محمد صالح بن طاھر بنتن نے وزارت حج کے دو ڈائریکٹرز کو ان کے عہدے سے ہٹاتے ہوئے حج کے امور میں غفلت برتنے پران کے خلاف تحقیقات شروع کی ہیں۔

العربیہ چینل کی رپورٹ کے مطابق وزارت حج وعمرہ کی طرف سے جاری ایک بیان میں بتایا گیا ہےکہ جنوبی ایشیا حج امورکی نگرانی فائونڈیشن کے دفتر 80 اور 82 کے دو ڈائریکٹرز کوحج کے موقع پراپنی ذمہ داریوں میں غفلت برتنے پربرطرف کردیا گیا ہے۔ انہیں تحقیقات کے لیے متعلقہ حکام کے حوالے کیا گیا ہے۔

برطرف کیے گئے دونوں عہدیداروں کی جگہ نئے افسران تعینات کیے گئے ہیں تاکہ حجاج کرام کے مناسک کی تکمیل اور ان کی وطن واپسی کو معمول کے مطابق آگے بڑھایا جاسکے۔

سعودی عرب کے وزیر برائے حج وعمرہ نے مکہ مکرمہ کے ڈپٹی گورنر شہزادہ بدر بن سلطان بن عبدالعزیز کی نشاندہی پر حج آپریشن کے لیے کام کرنے دو اہم دفاتر کے ڈائریکٹرز کو برطرف کیا گیا ہے۔

قبل ازیں سعودی عرب کے وزیر حج ڈاکٹر محمد صالح بن طاھر بنتن نے حج آپریشن کے دو عہدیداروں کو اپنے فرائض منصبی کی انجام دہی میں کوتاہی برتنے پر کام سے روک دیا تھا۔