.

براک اوباما کی دوسری مدت صدارت کے لیے حلف برداری

''میں نے یہ کر دکھایا'': سیاہ فام صدر کے حلف لینے کے بعد الفاظ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
امریکی صدر براک اوباما نے وائٹ ہاؤس واشنگٹن میں منعقدہ ایک مختصر تقریب میں دوسری مدت صدارت کے لیے اپنے عہدے کا حلف اٹھا لیا ہے۔

امریکا کے چیف جسٹس جان رابرٹس نے مقامی وقت کے مطابق گیارہ بج کر پچپن منٹ پر ان سے حلف لیا۔ انھوں نے خاتون اول مشعل اوباما کے خاندان کے انجیل کے نسخے پر حلف اٹھایا اور حلف کے وقت مشعل اوباما ہی نے انجیل کا نسخہ پکڑ رکھا تھا۔

امریکی صدر کے حلف کے یہ الفاظ تھے:''میں یہ حلفیہ اقرار کرتا ہوں کہ میں ریاست ہائے متحدہ امریکا کے صدر کی حیثیت سے اپنی بہترین صلاحیت کے مطابق ذمے داریاں نبھاؤں گا۔ امریکا کے آئین کی پاسداری کروں گا، اس تحفظ کروں گا اور اس کا دفاع کروں گا۔اللہ میری مدد کرے''۔

چیف جسٹس نے پہلے یہ الفاظ (انگریزی میں ) دُہرائے اور براک اوباما بلند آواز میں ان کے پیچھے یہ دہراتے رہے۔ ان کا دائیں ہاتھ فضا میں بلند اور بایاں بائبل کے اوپر رکھا تھا۔حلف برداری کی یہ تقریب ایک منٹ سے بھی کم وقت میں ختم ہو گئی۔ اس کے بعد امریکی صدر نے اپنی اہلیہ مشعل سے معانقہ کیا، دونوں بیٹیوں سے پیار کیا اور یہ کہا کہ ''میں نے یہ کر دکھایا ہے''۔

اکاون سالہ براک اوباما سوموار کو دوسری مدت کے لیے اپنا منصب سنبھالیں گے۔ وہ امریکا کے پہلے سیاہ فام صدر ہیں۔ وہ نومبر میں دوسری مرتبہ ملک کے صدر منتخب ہوئے تھے۔ انھیں اس وقت قرضوں میں جکڑی امریکی معیشت کی بحالی کا سب سے بڑا چیلنج درپیش ہے۔