کویت: ایرانی سمیت 25 مقامی مشتبہ شدت پسندوں کا ٹرائل

مشتبہ ملزمان کو ایران کے لیے جاسوسی سمیت کئی الزامات کا سامنا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

کویت کے پبلک پراسیکیوٹر جنرل نے اطلاع دی ہے کہ 25 مقامی اور ایک ایرانی شہری کے خلاف ایران اور لبنانی شیعہ ملیشیا حزب اللہ کے لیے جاسوسی کے الزامات کے تحت ٹرائل شروع کردیا گیا ہے۔

کویتی پراسیکیوٹر کا بیان سرکاری خبر رساں ایجنسی "کونا" کی جانب سے نشر کیا گیا ہے جس میں ملزمان پر عاید الزامات کی تفصیل بیان کی گئی ہے۔ بیان میں کہا گیا ہے کہ پچیس میں سے تین ملزمان مفرور ہیں جب کہ باقی کو گذشتہ روز عدالت میں پیش کیا گیا۔ ان پر غیر قانونی آتشیں اسلحہ، آلات جاسوسی رکھنے، ایران کے لیے جاسوسی کرنے، ملک کی سلامتی اور وحدت کے خلاف سازش، ریاست کے خلاف ہتھیار اٹھانے اور دہشت گردی اور بدامنی پھیلانے کےلیے دوسروں کو عسکری تربیت فراہم کرنے کے الزامات عاید کیے گئے ہیں۔ عدالت نے تمام ملزمان کو پولیس کی تحویل میں دینے کا فیصلہ دیا ہے۔

خیال رہے کہ کویتی حکام نے 13 اگست کو عراق کی سرحد کے قریب العبدلی کے مقام سے کئی مشتبہ شدت پسندوں کو بھاری اسلحہ اور گولہ بارود کے ساتھ حراست لینے کا دعویٰ کیا تھا۔ ملزمان کے قبضے سے 19 ہزار کلو گرام جنگی سامان جس میں 144 کلو گرام دھماکہ خیز مواد، 68 اقسام کے ہتھیار،204 دستی بم اور بجلی کی تاریں برآمد کی گئی تھیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں