فرانسیسی مظاہرین کا مسجد پر دھاوا، قرآن کی بے حرمتی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

فرانسیسی جزیرے کورسیکا میں مسلمانوں اور عرب مہاجرین کے خلاف ہونے والے احتجاج کے دوران مظاہرین نے ایک مسجد پر دھاوا بول دیا اور قرآن پاک کے متعدد نسخوں کی بے حرمتی کی۔

اطلاعات کے مطابق کورسیکا کے علاقے اجاکسیو میں جمعہ کے روز تقریبا 600 افراد کے ہجوم نے عرب مہاجرین کے رہائشی علاقے کا رخ کر لیا جہاں پر انہوں نے تعصب پر مبنی نعرے لگائے۔

مقامی افسر فرانو للین نے بتایا کہ ان مظاہرین کا ایک گروپ زبردستی مسجد میں داخل ہوگیا اور بلوائیوں نے توڑ پھوڑ کرتے ہوئے قرآن کے کچھ نسخوں کو نقصان پہنچایا۔

فرانسیسی صدر مانویل والز کا کہنا تھا کہ اجاکسیو شہر میں مظاہرین کی جانب سے کی جانے والی کارروائی 'ناقابل قبول بے حرمتی' ہے۔

للین کا مزید کہنا تھا کہ حکام نے حالات پر قابو پانے کے لئے رات بھر مسلمانوں کی پانچ مساجد کے باہر پولیس تعینات کر رکھی تھی۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں