.

سعودی فورسز نے جازان کی جانب داغا گیا حوثیوں کا بیلسٹک میزائل مار گرایا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سعودی عرب کی فورسز نے یمن سے حوثی شیعہ باغیوں کے داغے گئے ایک بیلسٹک میزائل کو فضا میں سراغ لگا کر تباہ کردیا ہے۔اس میزائل کا ہدف سعودی عرب کا جنوبی صوبہ جازان تھا۔

جازان سے العربیہ کے نمایندے ہانی الصفیان نے اطلاع دی ہے کہ سعودی عرب کی فضائیہ نے منگل کی شب مقامی وقت کے مطابق قریباً آٹھ بج کر بیس منٹ پر اس میزائل کو ناکارہ بنایا ہے۔

انھوں نے مزید بتایا ہے کہ اس میزائل سے جازان میں روزمرہ معمولاتِ زندگی پر کوئی فرق نہیں پڑا ہے اور وہ اسی طرح جاری رہے ہیں۔

حوثیوں کے اس میزائل حملے سے چند روز قبل ہی اقوام متحدہ کے ماہرین نے اپنی رپورٹ میں کہا ہے کہ ایران نے سلامتی کونسل کی یمن پر اسلحے کی پابندی سے متعلق قرار داد کی خلاف ورزی کرتے ہوئے حوثی شیعہ باغیوں کو بالواسطہ یا بلا واسطہ میزائل اور ڈرونز مہیا کیے ہیں۔

سعودی وزیر خارجہ عادل الجبیر نے بھی برسلز میں ایک نیوز کانفرنس کے دوران ایران پر الزام عاید کیا ہے کہ وہ لبنان ، یمن اور شام میں اپنے کردار کی وجہ سے خطے میں خطرے کا سب سے بڑا منبع ہے۔انھوں نے کہا کہ ایران کے مہیا کردہ بیلسٹک میزائلوں سے حوثی باغی سعودی عرب کو نشانہ بنا رہے ہیں۔