.

یو اے ای یمنی عوام کی مدد کے لیے مہم میں اہم شراکت دار ہے: شہزادہ خالد بن سلمان

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

امریکا میں متعیّن سعودی سفیر شہزادہ خالد بن سلمان نے یمن میں جاری مہم میں متحدہ عرب امارات کو ایک اہم اتحادی اور شراکت دار قرار دیا ہے اور یمنی عوام کی حمایت پر اپنے اماراتی بھائیوں کا شکریہ ادا کیا ہے۔

انھوں نے جمعرات کو ایک ٹویٹ میں لکھا ہے کہ یو اے ای سعودی عرب کے ساتھ مل کر یمنی عوام کے لیے اقوام متحدہ کے تحت انسانی امدادی سرگرمیوں کو بھی عملی جامہ پہنانے میں اہم کردار ادا کررہا ہے۔

اقوام متحدہ نے جنوری کے اوائل میں یمنی عوام کے لیے ایک جامع امدادی منصوبے کا اعلان کیا تھا اور اب تک قریباً تین ارب ڈالرز کی امداد لاکھوں یمنی عوام تک پہنچ چکی ہے یا پہنچنے والی ہے۔

متحدہ عرب امارات نے بدھ کو اقوام متحدہ کے یمن میں اس انسانی امدادی منصوبے کے لیے 50 کروڑ ڈالرز دینے کا وعدہ کیا ہے۔سعودی عرب اور متحدہ عرب امارات مشترکہ طور پر اقوام متحدہ کی جنگ زدہ ملک میں انسانی امدادی سرگرمیوں کے لیے 93 کروڑ ڈالرز دے چکے ہیں ۔

سعودی ولی عہد شہزادہ محمد بن سلمان نے منگل کے روز نیویارک میں اقوام متحدہ کے سیکریٹری جنرل انتونیو گوٹیریس سے ملاقات میں ماضی میں اعلان کردہ امدادی رقوم کے چیک پیش کیے تھے۔انتونیو گوٹیریس نے سعودی ولی عہد کا غربت زدہ یمنی عوام کی حالت زار بہتر بنانے کے لیے اس فراخدلانہ امداد پر شکریہ ادا کیا تھا۔واضح رہے کہ یمن کے دو کروڑ بیس لاکھ افراد کو اس وقت خوراک اور دیگر انسانی امداد کی اشد ضرورت ہے۔