.

عرب اتحاد کے صعدہ اور البیضا ءمیں حوثیوں کے ٹھکانوں پر 20 فضائی حملے

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

عرب اتحاد کے لڑاکا طیاروں نے یمن کے شمالی صوبے صعدہ ، الجوف اور البیضاء گورنریوں میں سوموار کو حوثی ملیشیا کے ٹھکانوں پر بیس سے زیادہ حملے کیے ہیں ۔ ان میں دسیوں حوثی جنگجو ہلاک اور زخمی ہوگئے ہیں ۔

عسکری ذرائع نے العربیہ کو بتایا ہے کہ عرب اتحاد کے لڑاکا طیاروں نے صوبہ صعدہکے علاقوں الملاحیظہ ، البقع اور باقم میں حوثیوں کے ٹھکانوں پر بمباری کی ہے۔ لڑاکا جیٹ نے جبل الظہرہ اور جوف میں واقع وادی القعیف پر بھی حوثیوں کے ٹھکانوں کو اپنے حملوں میں نشانہ بنایا ہے۔

البیضاء شہر میں حوثی ملیشیا کے مرکزی سکیورٹی ہیڈ کوارٹرز پر بمباری سے دسیوں جنگجو ہلاک اور زخمی ہوگئے ہیں۔ یمنی صدر عبد ربہ منصور ہادی کی وفادار فورسز نے اتحادی فورسز کی مدد سے حوثی ملیشیا کے مضبوط گڑھ صعدہ میں چار محاذوں پر کارروائی جاری رکھی ہوئی ہے اور انھوں نے الملاحظہ کے محاذ پر ایک کیمپ اور تزویراتی اہمیت کے حامل ٹھکانوں پر قبضہ کر لیا ہے۔

یمنی فوج ضلع الظاہر کے مرکز جمعہ ابن فاضل کی جانب بھی پیش قدمی کررہی ہے ۔اس سے یہ بھی ظاہر ہوتا ہے کہ حوثی ملیشیا کے اپنے مضبوط مرکز ہی میں اب پاؤں اکھڑ چکے ہیں اور وہ وہاں سے پسپا ہورہی ہے۔

مشرق کی جانب کتاف کے محاذ سے مغرب میں الملاحظہ کے محاذ تک اور سرحدی صوبے صعدہ کے شمالی علاقوں میں یمنی فورسز اور حوثی ملیشیا کے درمیان جھڑپوں میں شدت آرہی ہے جبکہ یمنی فوج عرب اتحاد کی فضائی اور برّی فوج کی مدد سے تیز رفتاری سے پیش قدمی کررہی ہے۔