سوڈان : پتھراؤ سے زخمی ہونے والا پولیس اہل کار چل بسا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

سوڈان میں پولیس نے جمعے کی شام تصدیق کی ہے کہ دارالحکومت خرطوم میں گھات لگا کر کی جانے والی ایک کارروائی میں اس کا ایک اہل کار ہلاک ہو گیا۔

پولیس ترجمان ہاشم عبدالرحیم نے ایک پریس کانفرنس میں بتایا کہ جمعرات کے روز خرطوم کے علاقے الامتداد میں پولیس اہل کاروں کی گاڑی کو ایک جگہ رکاوٹوں کے سبب سڑک بند ملی۔ اسی دوران سڑک کے نزدیک چھپے ہوئے نامعلوم افراد کے ایک گروپ نے اچانک گاڑی پر پتھروں کی بارش کر دی۔

ترجمان کے مطابق اس کے نتیجے میں پولیس اہل کار زخمی ہو گئے۔ ان میں شدید زخمی ہونے والا ایک اہل کار نجم الدین محمد علی فوت ہو گیا۔

ترجمان نے واضح کیا کہ گاڑی میں سوار جن پولیس اہل کاروں کو نشانہ بنایا گیا ان کے پاس کسی قسم کے ہتھیار یا ہنگامہ آرائی سے نمٹنے کا سامان نہیں تھا کیوں کہ وہ تربیتی مرکز سے مقامی پولیس کے صدر دفتر جا رہے تھے۔

ترجمان کے مطابق پولیس اہل کار کی ہلاکت میں ملوث ہونے کے شبہے میں کئی افراد کو حراست میں لے لیا گیا ہے جب کہ بقیہ کی تلاش جاری ہے۔

یاد رہے کہ متعلقہ حکام نے جمعرات کے روز دارالحکومت خرطوم کے وسط میں ایک مظاہرے کو منتشر کر دیا تھا۔ اس دوران آنسو گیس کا استعمال کیا گیا اور درجنوں افراد کو گرفتار کر لیا گیا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں