مریضوں کے آپریشن ٹک ٹاک پر شائع کرنے پرآسٹریلوی ڈاکٹر کو سزا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

آسٹریلوی محکمہ صحت نے متنازعہ ڈاکٹر ڈینیئل لینزر کو ہر قسم کی پلاسٹک سرجری کرنے پر پابندی عائد کرتے ہوئے سزا سنائی ہے۔

محکمہ صحت نے ان کی سوشل میڈیا پوسٹس کو ہٹانے کا بھی حکم دیا۔

تفصیلات کے مطابق آسٹریلین ہیلتھ پریکٹیشنرز ایجنسی (AHPRA) نے ڈاکٹر ڈینیئل آرونوف پر کچھ شرائط عائد کیں جو سوشل میڈیا پر سب سے زیادہ فالو کیے جانے والے پلاسٹک سرجن قرار دیے جاتے ہیں۔ ان کے ٹک ٹاک پر 13 ملین سے زیادہ فالوورزتھے۔ ان کا اکاؤنٹ دو ہفتے قبل اچانک ڈیلیٹ کر دیا گیا۔ .

پریشان کن اقدامات، سنگین خلاف ورزیاں

آسٹریلیا کے اے بی سی نیٹ ورک کے مطابق ایک ماہ قبل متنازع ڈاکٹر کے حوالے سے صحافتی تحقیقات کی گئی تھیں جس میں لینزر کلینکس پر تشویشناک کارروائیوں کا الزام لگایا گیا ہے۔ ان میں حفظان صحت اور حفاظت کی سنگین خلاف ورزیاں شامل ہیں۔

تحقیقات میں ڈاکٹر لینزر کی طرف سے اٹھائے گئے اقدامات کے بارے میں بھی بتایا گیا جس سے مریضوں کو شدید درد کی شکایت ہوئی اور مزید طبی علاج کی ضرورت پڑی۔

ایجنسی نے اعلان کیا کہ لینزر نے آسٹریلیا میں ادویات کی پریکٹس بند کرنے کی قانونی ذمہ داری ادا کی ہے جب کہ وہ اس کی اور اس کے کلینک کے نیٹ ورک کی تحقیقات جاری رکھے ہوئے ہے۔

حکام نے ارونوف کو معمولی سرجریوں سمیت کاسمیٹک یا جراحی کے طریقہ کار کو انجام دینے سے بھی منع کیا لیکن اسے اجازت دی کہ وہ جنرل پریکٹیشنر کے طور پر کام جاری رکھ سکیں گے۔

اس نے سوشل میڈیا سے متعلق دیگر شرائط بھی عائد کی ہیں جن میں شائع شدہ مواد یا پلاسٹک سرجری یا سرجری سے متعلق معلومات کو اس کے اکاؤنٹس سے ہٹانا شامل ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں