جنگ شروع ہونے کے بعد سلامتی کونسل میں زیلنسکی کا پہلا خطاب آج ہو گا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size

یوکرین کے صدر ولودی میر زیلنسکی آج منگل کے روز وڈیو کے ذریعے عالمی سلامتی کونسل سے خطاب کریں گے۔ ان کا خطاب یوکرین کے معاملے کے لیے مختص اجلاس میں ہو گا۔ یہ بات پیر کے روز سلامتی کونسل میں برطانوی پریذیڈنسی نے بتائی۔ توقع ہے کہ زیلنسکی اپنے خطاب میں دارالحکومت کیف کے نزدیک واقع قصبے بوچا کے واقعات پر روشنی ڈالیں گے۔ واضح رہے کہ قصبے سے روسی انخلا کے بعد وہاں درجنوں لاشیں ملیں۔ ان میں بعض سڑکوں پر پڑی تھیں اور بعض اجتماعی قبروں میں دفنائی گئیں۔

یوکرین میں 24 فروری کو روسی فوجی آپریشن شروع ہونے کے بعد سلامتی کونسل میں زیلنسکی کا یہ پہلا خطاب ہو گا۔

سلامتی کونسل کے آج ہونے والے اجلاس میں اقوام متحدہ کے سکریٹری جنرل انتونیو گوٹیرس بھی شریک ہوں گے۔

متعدد مغربی ممالک اور اقوام متحدہ نے یوکرین کے قصبے بوچا میں سامنے آنے والے مناظر کی مذمت کی تھی۔ روسی افواج کے انخلا کے بعد پیر کے روز ولودی میر زیلنسکی نے قصبے کا دورہ کیا۔

مقبول خبریں اہم خبریں