یونان کا اسرائیل سے ٹینک شکن میزائل کے لیے 400 ملین ڈالر کا معاہدے

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size

اسرائیل کی وزارت دفاع نے پیر کو کہا کہ اسرائیل نے یونان کو سپائیک اینٹی ٹینک میزائل فروخت کرنے کے لیے 1.44 بلین شیکل (400 ملین ڈالر) کے معاہدے پر دستخط کیے ہیں۔

سپائیک ایک گائیڈڈ ٹینک شکن میزائل ہے جسے کئی یورپی یونین اور نیٹو ممالک استعمال کرتے ہیں جو اسرائیل کے سرکاری دفاعی ٹھیکیدار کمپنی رافیل نے تیار کیا ہے۔

رافیل کے سی ای او یوو ہار-ایون نے کہا، "اسپائیک میزائل یونانی فوج کے آپریشنل ٹولز کے پورٹ فولیو کو مضبوط کریں گے اور ہم مستقبل قریب میں اسٹریٹجک تعاون کے ذریعے مزید توسیع کی توقع رکھتے ہیں۔"

یہ نیٹو میں نئے شامل ہونے والے رکن فن لینڈ کے ساتھ اسی سائز کے فضائی دفاع کے معاہدے کے کچھ ہی دن بعد آیا ہے۔

پچھلے ہفتے اسرائیل اور رافیل نے کہا تھا کہ وہ 4 اپریل کو نیٹو میں باضابطہ طور پر شمولیت کے بعد فن لینڈ کو ڈیوڈز سلنگ جدید فضائی دفاعی نظام فراہم کریں گے۔

فن لینڈ کو 316 ملین یورو (345 ملین ڈالر) کے معاہدے میں بیلسٹک اور کروز میزائلوں کو روکنے کے لیے ڈیزائن کردہ دفاعی نظام ملے گا۔ تاہم اسے ابھی بھی امریکا سے منظوری درکار ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں