صومالیہ نے دہشت گردی کے خدشات کے پیش نظر ٹک ٹاک اور ٹیلی گرام کو معطل کردیا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

صومالی حکومت نے ٹک ٹاک، ٹیلی گرام، اور شرط لگانے والی ایک کمپنی ون ایکس بیٹ کو یہ دلیل دیتے ہوئے معطل کر دیا ہے کہ انہیں مشرقی افریقی ملک میں دہشت گرد اور بے حیائی کو فروغ دینے والے گروہ استعمال کرتے ہیں۔

وزارتِ مواصلات و ٹیکنالوجی نے پیر کو انٹرنیٹ سروس فراہم کرنے والوں کو یہ ایپس بلاک کرنے کا حکم دیا۔ یہ فیصلہ ایسے وقت میں آیا ہے جب ملک کے وسطی علاقے میں شدت پسند گروپ الشباب کے خلاف لڑائی میں شدت آ رہی ہے۔

یہ پہلا موقع ہے جب حکومت نے انسدادِ دہشت گردی کی کوششوں کے نام پر مخصوص ایپس کو بند کرنے کا حکم دیا ہے۔

رواں ماہ کے شروع میں سینیگال نے ٹک ٹاک کو ان خدشات کی بنا پر معطل کر دیا تھا کہ یہ پرتشدد مظاہروں کو ہوا دینے کے لیے استعمال ہو رہی تھی۔ کینیا کے قانون سازوں نے بھی اس سوشل میڈیا پلیٹ فارم کی تحقیقات کا اعلان کیا ہے جب انہیں ایک درخواست موصول ہوئی جس میں "نامناسب" ہونے کی وجہ سے اس پر پابندی لگانے کا مطالبہ کیا گیا تھا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں