روس اور یوکرین

یوکرین کا کریمیا میں روس کا ایس 400 میزائل سسٹم تباہ کرنے کا اعلان

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
3 منٹس read

یوکرین نے جزیرہ نما کریمیا میں روس کا ایس -400 طیارہ شکن نظام تباہ کرنے کا اعلان کیا ہے۔

یوکرین کی وزارت دفاع نے سوشل میڈیا پر اطلاع دی ہے کہ بدھ کو مقامی وقت کے مطابق صبح 10 بجے کے قریب ایک دھماکا ہوا تھا اور روس کے طویل اور درمیانے فاصلے تک مار کرنے والے ایس-400 فتح فضائی دفاعی نظام کو تباہ کردیا گیا ہے۔

وزارت نے ایک بڑے دھماکے کی ویڈیو پوسٹ کی ہے۔اس میں دھویں کا ایک ستون آسمان کی طرف اٹھ رہا ہے۔بیان میں کہا گیا ہے کہ یہ دھماکا جزیرہ نما ترخانکوٹ میں اولنیفکا گاؤں کے قریب ہوا اور اس سے نظام، اس کے میزائل تباہ اور اہلکار ہلاک ہو گئے ہیں۔

یوکرینی وزارت نے دعویٰ کیا ہے کہ یہ قابضین کے فضائی دفاعی نظام کے لیے ایک تکلیف دہ دھچکا ہے جبکہ ماسکو کی جانب سے فوری طور پراس دعوے پر کوئی تبصرہ نہیں کیا گیا۔تاہم روس کے فوجی بلاگروں کا کہنا ہے کہ اس حملے سے روس کی دفاعی صلاحیتوں میں خامیوں کی نشان دہی ہوتی ہے۔

بااثر ریبار ٹیلی گرام چینل، جس کے بارہ لاکھ فالورز ہیں، کا کہنا ہے کہ اس حملے نے ایس -300 سسٹم کو تباہ کردیا۔اس سے ایک بار پھر سوال یہ پیدا ہوتا ہے کہ یوکرین کی کشتیاں کریمیا کے ساحلوں کے اتنے قریب کیوں آجاتی ہیں۔انھوں نے یہ کام ایک سے زیادہ بار کیا ہے۔

روس نے منگل کے روز کہا تھا کہ اس نے بحیرۂ اسود میں یوکرین کی دو کشتیوں کو تباہ کر دیا ہے، لیکن بیان میں کہا گیا کہ یہ مشق ’’کافی نہیں‘‘ تھی۔ریبار نے کہا:’’ہمیں پورے یوکرینی بیڑے کی منظم شکست کی ضرورت ہے، اور اس کے لیے روسی بحریہ کی تنظیم میں تبدیلیوں کی ضرورت ہے‘‘۔

ایک اور چینل وونی افسویدومی ٹیل نے کہا ہے کہ یہ حملہ ’’روس کے سب سے زیادہ ’میزائل زدہ‘ علاقوں میں سے ایک میں فضائی دفاعی کوریج کے معیار کے بارے میں جائز سوال اٹھاتا ہے۔

ان دونوں چینلوں نے قیاس آرائی کی ہے کہ یہ حملہ میزائل اور ڈرون سے کیا گیا تھا۔حالیہ ہفتوں میں روس کے عمل داری والے علاقے کریمیا کو کم وبیش روزانہ ڈرون حملوں میں نشانہ بنایا جا رہا ہے۔بدھ کو علی الصباح ماسکو کو مسلسل چھٹی رات ڈرون حملے میں نشانہ بنایا گیا۔

بعد ازاں ماسکو کے جنوب میں واقع علاقے کالوگا کے گورنر ولادیسلاف شاپشا نے کہا کہ ان کے علاقے میں فضائی دفاعی نظام نے دو ڈرونز کو مار گرایا ہے۔ واضح رہے کہ روس نے سنہ 2014ء میں یوکرین کی ریاست کریمیا کا الحاق کرلیا تھا اور وہاں اپنی حکومت قائم کرلی تھی۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں