.

''آمر ڈائریاں'':پتلی شو میں صدر بشارالاسد پر طنز کے نشتر

''آمر کے بچگانہ بیٹے'' کا آن لائن مضحکہ اڑانے کا سلسلہ جاری

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

شام میں جہاں ایک طرف تشدد ،خونریزی کا سلسلہ جاری ہے وہیں کچھ ستم ظریفوں نے صدر بشارالاسد کا مضحکہ اڑانے کا موقع بھی ڈھونڈ لیا ہے اور وہ شامی تنازعے کے تناظر میں ایک آن لائن پتلی شو میں ان پر طنز وتنقید کے نشتر چلا رہے ہیں۔

یوٹیوب پر مسستی مطی نے ''ٹاپ گون:لٹل ڈکیٹر کی ڈائریز'' کے عنوان سے ایک پتلی شو ترتیب دیا ہے جو ویڈیو شئیرنگ کی ویب سائٹ یو ٹیوب پر دکھایا جارہا ہے۔

اس آن لائن شو میں بیشو کے نام سے شامی صدر بشارالاسد کا پتلا بنایا گیا ہے۔برطانوی اخبار گارجین میں شائع شدہ ایک رپورٹ کے مطابق اس کردار کو سفاک قاتل اورایک آمر کے بچگانہ بیٹے کے طور پر پیش کیا گیا ہے۔بشارالاسد کے پتلے کی ناک لمبی اور کان بڑے بڑے بنائے گئے ہیں۔

گون نامی ایک جرائم پیشہ شخص بشارالاسد کو تحفظ مہیا کرتا ہے جبکہ شامی شہریوں کو بہادر اور آئیڈیل کے طور پیش کیا گیا ہے۔اس آن لائن شو کی پہلی سیریز مارچ 2011ء میں صدر بشارالاسد کے خلاف عوامی احتجاجی تحریک کے آغاز کے تھوڑی دیر کے بعد ہی دکھائی گئی تھی۔اس کو اب تک یوٹیوب پر دو لاکھ سے زیادہ افراد دیکھ چکے ہیں۔اس شو کو دبئی سے نشریات پیش کرنے والے شامی حزب اختلاف کے ٹی وی چینل اورینٹ پر بھی پیش کیا گیا تھا۔

اس سیریز کے ڈاَئریکٹر محمد جمیل نے گارجین کو بتایا کہ پتلوں اور پتلیوں کا استعمال اس میں کام کرنے والے دس فن کاروں کی شناخت کو چھپانے کے لیے ضروری تھا۔انھوں نے اخبار کو بتایا کہ اس شو کی قسطیں بیروت میں فلمائی جارہی ہیں۔ٹاپ گون کو آیندہ ماہ لندن میں عرب ثقافت کے میلے شبک میں بھی دکھایا جاَئے گا۔