شام: امریکا روس معاہدہ، عمل اقوام متحدہ کی توثیق سے مشروط

یو این معائنہ کاروں کو مکمل رسائی دیں گے: شامی وزیر اطلاعات

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

امریکا اور روس کے درمیان کیمیائی ہتھیاروں سے متعلق ہونے والے معاہدے کی اقوام متحدہ سے توثیق کی صورت میں شام معاہدے پر پوری طرح عمل کرے گا۔ اس امر کا اظہار شامی وزیر اطلاعات عمران عاهد الزعبی نے ایک تازہ انٹرویو میں کیا ہے۔

شامی وزیر اطلاعات نے کہا ''اقوام متحدہ سے جو بھی سامنے آئے گا شام اس کی پابندی کرے گا، شام نے کیمیائی ہتھیاروں سے چھٹکارے کے لیے روسی منصوبے کو قبول کرتے ہوئے کیمیائی ہتھیاروں کی فہرست تیار کرنا شروع کر دی ہے۔'' انہوں نے کہا '' شام اپنا کام شروع کر چکا ہے، اس سلسلے میں دستاویزات کی تیاری پہلے سے ہی جاری ہے کہ شام وقت ضائع کرنے پر یقین نہیں رکھتا۔''

شام کے وزیر اطلاعات نے یہ باتی شامی کیمیائی ہتھیاروں سے متعلق امریکا اور روس کے وزرائے خارجہ کے درمیان جنیوا میں طے پانے والے معاہدے کے اگلے روز کہی ہیں۔ تاہم شامی وزیر اطلاعات کے الفاظ تھے'' شام اس معاہدے پر اسی صورت عمل کرے گا کہ اسے اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کے ذریعے زیاد ٹھوس شکل میں آگے بڑھایا جائے گا۔''

شامی وزیر کا کہنا تھا '' گزشتہ چالیس سال کے دوران شام نے جب بھی کوئی وعدہ کیا ہے تو اسے پورا کیا ہے۔'' ایک سوال کے جواب میں ان کا کہنا تھا ''ہم اس معاہدے کو بڑی سنجیدگی سے لے رہے ہیں، اس لیے ہم اقوام متحدہ کے معائنہ کاروں کو کیمیائی ہتھیاروں تک مکمل رسائی دیں گے، کہ شام اپنے قول کا پکا ہے۔''واضح رہے شامی حکومت روسی تجویز پر امریکا اور روس کے درمیان جنیوا میں ہونے والے اس معاہدے کو اپنی فتح سے تعبیر کر رہی ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں