ویڈیو: عرب فلسطینی نے بلڈوزر اسرائیلی بس پر چڑھا دیا

غزہ میں اسرائیلی جارحیت پر اندرون القدس انتفامی کارروائیوں کا آغاز

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

غزہ میں نہتے فلسطینیوں کے خلاف اسرائیل کی دہشت گردانہ کارروائیوں کا جواب دینے کے لئے اب انتقامی حملے ہی باقی رہ گئے ہیں جنہیں وہ اپنے مخصوص طریقے سے بروئے کار لا رہے ہیں۔

ایسی ہی ایک انتقامی کارروائی میں ایک فلسطینی بلڈوزر ڈرائیور نے مشرقی القدس میں اپنا بلڈوزر اسرائیلی مسافر بس سے عمدا ٹکرا دیا۔ دیو ہیکل بلڈوزر کی ٹکر سے مسافر بس الٹ گئی جس سے بس کا ڈرائیور زخمی ہوا۔ عرب فلسطینی کا کلیجہ اس کارروائی پر ٹھنڈا نہیں ہوا تو اس نے سڑک پر چلنے والے ایک اسرائیلی شہری کو بلڈوزر تلے کچل ڈالا جبکہ اس کی زد میں آنے والے پانچ دوسرے افراد زخمی ہوئے۔

اس تمام کارروائی کو سڑک پر لگے مانیٹرنگ کیمروں نے مختلف زاویوں سے محفوظ کر لیا۔ یہ کارروائی اتنی فوری اور اچانک ہوئی کہ اسرائیلی پولیس کو صرف اس وقت حرکت کرنے کا موقع ملا جب عرب فلسطینی اپنا کام دکھا چکا تھا مگر پولیس نے اپنے لیٹ ایکشن کا جواز پیش کرنے کے لئے بلڈوزر ڈرائیور کو بلٹ فائر کر کے شہید کر دیا۔

اسرائیلی پولیس کی ترجمان نے مشرقی بیت المقدس میں پیر کے روز ہونے والی اس کارروائی کو 'دہشت گردانہ اقدام' سے تعبیر کیا تاہم انہوں نے غزہ میں نہتے اور بے گناہ فلسطینیوں کے خون سے کھیلی جانے والی اسرائیلی ہولی پر تبصرہ کرنامناسب نہیں جانا۔ اسرائیلی ایمبولینس سروس کی ترجمان زاکیھیلر نے بتایا کہ ایک پچیس سالہ عرب فلسطینی نوجوان نے اپنے بلڈوزر سے اسرائیلی شہریوں کو کچلنے کی کوشش کی جس پر پولیس نے جوابی کارروائی کرتے ہوئے بلڈوزر ڈرائیور کو شہید کر دیا۔ ترجمان نے بتایا کہ اس کارروائی میں چار افراد زخمی اور اسرائیلی شہری ہلاک ہوا۔

العربیہ نیٹ کی خبر کے ساتھ منسلک ویڈیو میں فلسطینی بلڈوزر ڈرائیور بس پر چڑھائی کرتا نظر آتا ہے جبکہ اس کے بعد اسرائیلی پولیس اہلکاروں کی مختلف زایوں سے کی جانب اندھا دھند فائرنگ سے وہ جام شہادت نوش کرتا بھی دیکھا جا سکتا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں