مصر: سیناء میں خودکش دھماکہ انصار بیت المقدس نے کیا

ذمہ داری قبول کرنے سے متعلق وڈیو میں مزید حملوں کی دھمکی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

مصر میں عسکری کارروائیوں کے حوالے سے عسکری تنظیم انصار بیت المقدس نے سیناء میں خوفناک خود کش دھماکے کی ذمہ داری قبول کر لی ہے۔

اس خود کش دھماکے میں پچھلے ماہ 30 سکیورٹی اہلکار جاں بحق ہو گئے تھے۔ انصار بیت المقدس جزیرہ نما سیناء میں عسکری کارروائیوں کے حوالے سے ہراول دستہ مانا جاتا ہے۔

جولائی 2013 سے اب تک یہ گروپ بڑی تعداد میں کارروائیاں کر کے بہت سے پولیس اہلکاروں کو ہلاک کر چکا ہے۔

تاہم 24 اکتوبر کو شمالی سیناء کے علاقے میں کیے گئے خود کش دھماکے میں ایک فوجی چوکی چیک پوائنٹ کو ہدف بنایا گیا تھا۔

عسکری تنظیم کا کہنا ہے کہ اس نے یہ کارروائی اسلام پسندوں کے خلاف کارروائیوں کے ردعمل کے طور پر کی ہیں جو محمد مرسی کی صدارت سے برطرفی کے بعد سے جاری ہیں۔

واضح رہے مرسی کے اسلام پسند حامیوں اب تک کم از کم 1400 کی تعداد میں ہلاک کیا جا چکا ہے جبکہ 15000 کو جیلوں میں ڈالا جا چکا ہے۔

انصار بیت المقدس کی طرف سے جاری کی گئی وڈیو میں کہا کہا گیا ہے کہ آئندہ بھی اسی طرح کی کارروائیان جاری رکھی جائیں گی۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں