.

عراقی فورسز کا الانبار میں آپریشن،35 جنگجو ہلاک

اسلحہ اور گولہ بارود کی بھاری مقدار تباہ کر دی گئی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

عراقی سیکیورٹی فورسز نے شورش زدہ صوبہ الانبار میں عسکریت پسندوں کے خلاف آپریشن میں کم سے کم 35 داعشی جنگجو ہلاک کر دیے ہیں۔ فوج کی کارروائی میں دہشت گردوں کے زیرقبضہ اسلحہ اور گولہ بارود کی بھاری مقدار بھی تباہ کر دی گئی ہے۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق گذشتہ روز عراقی فوج نے الانبار،الجزیرہ اور البادیہ کے مقامات پر دولت اسلامی’’داعش‘‘ کے دہشت گردوں کے خلاف آپریشن شروع کیا۔ عسکریت پسندوں کے خلاف کارروائی کے دوران مشین گنوں سے لیس ایک گاڑی کو بھی بم سے اڑا دیا گیا جس کے نتیجے میں متعدد دہشت گرد ہلاک ہو گئے۔

عراقی وزارت دفاع کی ویب سائیٹ پر جاری ایک بیان میں کہا گیا ہے کہ ہفتے کی شام الانبار کے الفلاحات کے مقام پر فوج کے آمرڈ بریگیڈ آٹھ کے اہلکاروں نے کارروائی کر کے کم سے کم 35 دہشت گرد ہلاک اور درجنوں زخمی کر دیے ہیں۔ کارروائی میں شدت پسندوں کے اسلحہ کے کئی ذخائر کو بھی تباہ کر دیا گیا ہے۔

بیان میں کہا گیا ہے کہ الجزیرہ اور البادیہ کے مقامات پر فوج کی کارروائیوں میں متعدد عسکریت پسندوں کو حراست میں بھی لیا گیا ہے جن میں عانہ قصبے کا داعشی کمانڈر ابو عدی بھھی شامل ہے۔

فوج نے فلوجہ اور الجفہ کے مقامات پرعسکریت پسندوں کی سپلائی لائن کاٹتے ہوئے داعش کے کئی مراکز کو تباہ کر دیا ہے جس میں متعدد دہشت گرد ہلاک اور اسلحہ تباہ ہوا ہے۔ الانبار کے مضافاتی علاقے البوحدید الناصر میں فوج نے فرار ہونے والے داعشی دہشت گردوں پر حملہ کردیا جس کے نتیجے میں پانچ جنگجو ہلاک اور متعدد کو حراست میں لے لیا گیا۔