شوہر اور نندوں سے انتقام کی خاطر 56 خواتین اور بچوں کو جلا ڈالا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

کویت میں بدھ کے روز تین خواتین کےخلاف سزائے موت کے فیصلے پر عمل درامد کیا گیا۔ ان میں ایک خاتون کی جانب سے مرتکب جرم کی کہانی حقیقت میں حیران کن ہے۔

کویت کی سرکاری خبر رساں ایجنسی کے مطابق کویتی خاتون شہری نصرہ يوسف محمد العنزی کو سزائے موت دے دی گئی ہے۔ نصرہ نے 2009 میں دانستہ طور پر قتل کے جرم کا ارتکاب کیا تھا۔

تفصیلات کے مطابق نصرہ کے شوہر نے دوسری شادی کرنے کا مژدہ سنایا جس پر نصرہ غیرت اور غصے مغلوب ہو گئی اور اس نے انے شوہر اور سوکن سے انتقام لینے کا فیصلہ کر لیا۔

نصرہ نے اپنے شوہر کی شادی کے روز تقریب کے لیے نصب کیے جانے والے شامیانے میں پٹرول چھڑک کر آگ لگا دی جس کے نتیجے میں شامیانے کے اندر موجود 56 خواتین اور بچے جل کر موت کی نیند سو گئے۔

یاد رہے کہ خاتون مجرم نے عدالت کے سامنے اقرار کیا تھا کہ اس فعل کے پیچھے شوہر سے انتقام کا جذبہ کار فرما تھا.. اس لیے کہ اس کا شوہر اپنی بہنوں کے سامنے اُس وقت بھیگی بلی بن گیا جب اس کی بہنوں نے نصرہ کو خاندان کے گھر سے نکال باہر کیا۔ اس کے بعد ان بہنوں نے نصرہ کے شوہر کی دوسری شادی کا فیصلہ کر کے اس کی بیوی اور اکلوتے بچے کی زندگی تباہ کر دی۔ لہذا نصرہ نے اپنے شوہر اور اس کی بہنوں سے انتقام کی آگ میں جل کر اس بھیانک جرم کا ارتکاب کیا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں