.

شامی جمہوری فورسز الرقہ میں اولڈ سِٹی کے قریب

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

شامی جمہوری فورسز (ڈی ایس ایف) داعش کے مضبوط گڑھ الرقّہ میں پیش قدمی کرتے ہوئے قدیم شہر (اولڈ سِٹی) کے اطراف پہنچ گئی ہیں۔ شام میں انسانی حقوق کے مانیٹرنگ گروپ کے مطابق ڈی ایس ایف نے صنعتی علاقے کے 70 فی صد حصے پر کنٹرول حاصل کر لیا ہے۔

اس سے قبل ڈی ایس ایف نے بین الاقوامی اتحاد کی مدد سے الرقہ کے مشرقی حصے میں پیش قدمی کی جہاں صنعتی علاقہ واقع ہے۔ ڈی ایس ایف کے میڈیا کے ذمے دار نے تصدیق کی کہ اس وقت صنعتی علاقے میں شدید جھڑپیں ہو رہی ہیں کیوںکہ ابھی تک علاقے کا پورا کنٹرول حاصل نہیں ہو سکا۔

الرقہ شہر کے وسطی حصے سے قریب ہونے کہ وجہ سے یہاں لڑائی زیادہ دشوار ہو جائے گی کیوں کہ یہ گنجان آباد علاقہ ہے اور یہاں داعش تنظیم کی دفاعی لائن اور اہم ٹھکانے بھی موجود ہیں۔

ڈی ایس ایف کے جنگجو شہر کے مغربی علاقے حطین میں داخل ہونے کے لیے بھی کوشاں ہے۔ یہ علاقہ الرومانیہ کے علاقے سے متصل ہے جہاں ڈی ایس ایف پہلے ہی کنٹرول حاصل کر چکی ہیں۔شامی جمہوری فورسز نے شہر کے شمال میں کئی حملوں کے بعد ایک شوگر مل پر کنٹرول حاصل کر لیا ہے۔