.

سعودی عرب : سکیورٹی اہل کار جاں بحق ، قاضی الجیرانی کی لاش برآمد

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سعودی عرب میں مشرقی صوبے کے قصبے العوامیہ میں چھاپے کی کارروائی کے دوران فائرنگ کے تبادلے میں سعودی سکیورٹی فورسز کا ایک اہل کار خالد الصامطی جاں بحق ہو گیا۔ منگل کے روز ہونے والی اس کارروائی کے نتیجے میں دہشت گرد سلمان علی سلمان الفرج مارا گیا جو قطیف میں انتہائی مطلوب 23 افراد کی فہرست میں شامل تھا۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے ذرائع کے مطابق چھاپے کے مقام کے نزدیک سے شیخ محمد الجیرانی کی لاش بھی ملی ہے جو زمین میں مدفون تھی۔ قطیف کی عدالت میں محکمہ اوقاف کے قاضی الجیرانی کو ایک سال قبل اغواکر لیا گیا تھا۔

سعودی وزارت داخلہ نے رواں برس کے اوائل میں قاضی الجیرانی کو اُس کے گھر کے سامنے سے اغوا کیے جانے کا اعلان کیا تھا۔ بعد ازاں 3 افراد کے اس مجرمانہ کارروائی میں شریک ہونے کا انکشاف کیا گیا۔