.

عراق نے مقدس مقامات کی سیکیورٹی کی ایرانی پیشکش مسترد کر دی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

عراق کی حکومت نے مقدس مقامات کی سیکیورٹی کے حوالے سے ایران کی طرف سے فوج بھجوانے کی پیش کش مسترد کر دی ہے۔

’العربیہ ڈاٹ نیٹ’ کے مطابق کربلاء گورنری کے رکن رضا السیلاوی نے اتوار کو ایک بیان میں بتایا کہ مقامی حکومت نے چہلم کی تقریبات میں شیعہ زائرین کو سیکیورٹی فراہم کرنے کی ایرانی پیشکش ٹھکرا دی ہے۔

رضا السیلاوی نے ایک پریس کانفرنس میں کہا کہ ہمیں ایران کی طرف سے مقدس مقامات اور زائرین کی حفاظت کے لیے سیکیورٹی لینے کی کوئی ضروت نہیں۔ عراقی فوج، فرات آپریشنل فورس اور کربلاء پولیس سیکیورٹی کے اقدامات کے لیے کافی ہیں۔

ان کا کہنا تھا کہ لاکھوں کی تعداد میں عرب اورغیرملکی زائرین کی حفاظت کی ذمہ داری ماضی میں بھی مقامی پولیس اور سیکیورٹی اداروں کے کندھوں پرعاید رہی ہے۔ ہمیں ایران کی طرف ایسے کسی تعاون کی کوئی ضرورت نہیں۔ ان کا کہنا تھا کہ حکومت عراق میں مقدس مقامات کی سیکیورٹی کے لیے ایران کی کسی پیشکش پر غور نہیں کرے گی۔