.

ایران نے حوثی ملیشیا کے لیے "خود کش ڈرون طیارے" بھیجے ہیں: نیوز ویک

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

امریکی جریدے نیوز ویک کی ایک رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ ایران نے یمن میں حوثی ملیشیا کے لیے جدید ڈرون طیارے بھیجے ہیں۔

رپورٹ کے مطابق ایران نے شہید - 136 ماڈل کے ڈرون طیارے یمن کے شمالی صوبے الجوف میں تعینات کیے ہیں۔ یہ "خود کش طیاروں" کے نام سے بھی جانے جاتے ہیں۔

رپورٹ میں مزید بتایا گیا ہے کہ یمن میں ان طیاروں کے بھیجے جانے کا مقصد خطے میں مختلف اہداف کو حملوں کا نشانہ بنانا ہے۔

اس سے قبل جمعرات کے روز سرکاری ذرائع ابلاغ نے بتایا تھا کہ ایران نے خلیجِ عُمان میں بحری مشقوں کے سلسلے میں کروز میزائل داغے۔

حکومتی رپورٹ کے مطابق زمین سے زمین تک مار کرنے والے مختلف نوعیت کے کروز میزائلوں نے خلیج میں اور بحر ہند کے شمالی حصے میں اپنے اہداف کو کامیابی سے نشانہ بنایا۔

بحری مشقوں کے ترجمان ایڈمرل حمزہ علی کافیانی کا کہنا ہے کہ "دشمنوں کو معلوم ہونا چاہیے کہ ایرانی سمندری حدود کی کسی بھی خلاف ورزی کو ساحل اور سمندر سے کروز میزائلوں کے ذریعے نشانہ بنایا جائے گا"۔ اس حوالے سے کروز میزائلوں کے داغے جانے کی تصاویر بھی جاری کی گئی ہیں۔

بدھ کے روز شروع ہونے والی دو روزہ مشقوں کے دوران ایرانی بحریہ نے اپنے سب سے بڑے فوجی بحری جہاز کو بھی متعارف کرایا۔ یہ مشقیں ایسے وقت میں ہو رہی ہیں جب ایرانی جوہری پروگرام اور تہران پر امریکی دباؤ کی مہم کے بیچ کشیدگی میں اضافہ دیکھا جا رہا ہے۔

اس سے قبل ایرانی پاسداران انقلاب خلیج عربی کے ساحل پر میزائلوں کے ایک خفیہ اڈے کے قیام کا اعلان کر چکی ہے۔ تاہم اس اڈے کے مقام کا انکشاف نہیں کیا گیا۔