.

اردن کا تاریخی شہر’السلط‘ یونیسکو کے عالمی ثقافتی ورثے میں شامل

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

اقوام متحدہ کے ادارہ برائے سائنس وثقافت ’یونیسکو‘ نے چین کی میزبانی میں ہونے والے 44 ویں ورچوئل اجلاس کے دوران اردن کے تاریخی شہر السلط کو بھی عالمی ثقافتی ورثے میں شامل کیا ہے۔

اردن کے وزیر سیاحت وآثار قدیمہ نایف الفائز نے ایک بیان میں کہا کہ السلط شہر اردن کی اولین ترجیح ہے تاکہ اس کے باشندوں کی امن بقائے باہمی، رواداری اور مشترکہ سماجی بہبود کی خصوصیات کا اظہار کیا جا سکے۔

انہوں نے یونیسکو کے چین کی میزبانی میں ہونے والےورچوئل اجلاس سے خطاب میں کہا کہ السلط شہر اور اس کو وزٹ کرنے والے مقامی خاندانوں کے سماجی تکافل کا واضح ثبوت ہیں۔ اس شہر میں ایسی کوئی کالونی نہیں جو الگ سے کسی مذہب کی نمائندگی کرتی ہے یا اسے الگ سے کسی مذہبی بنیاد پرقائم کیا گیا ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ السلط شہر کو عالمی ثقافتی ورثے میں شامل کرنے سے روا داری اور مذاہب کے درمیان ہم آہنگی کےکلچر کو فروغ دینے میں مدد ملے گی۔