گارے کے ذریعے مشہور شخصیات کے مجسمے بنانے والا سعودی فن کار

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

سعودی نوجوان ناصر ہوساوی نے روڈ انجینئرنگ کے شعبے سے نکل کر فن کی دنیا میں طبع آزمائی کا فیصلہ کیا۔ اس نے قدرتی ریت سے اپنی من چاہی چیزوں کو مجسم صورت دینے پر کام شروع کر دیا۔ ناصر 4 برس تک بھرپور کام اور محنت کے ذریعے مجسمہ سازی میں اگلے مراحل تک پہنچ گیا۔ اس نے ریت کے ٹیلوں پر بھی مجسم صورتوں پر کام کیا۔

ناصر ہوساوی 2017ء میں انجینئرنگ کالج سے فارغ التحصیل ہوا۔ العربیہ ڈاٹ نیٹ سے گفتگو کرتے ہوئے ناصر نے بتایا "میں مجسمے اور فن پارے تشکیل دینے میں صحرا اور اس کی تاروں سے سجی راتوں پر مبنی افکار کو کام میں لایا ... میں نے اس کام میں مجسمہ سازی کے لیے کئی خام لوازمات استعمال کیے جن میں چُونا ، گارا اور لکڑی شامل ہیں"۔

ناصر کے مطابق انہوں نے کئی اہم شخصیات کے مجسمے بنائے جن میں نمایاں ترین شہزادہ محمد بن سلمان اور شہزادہ خالد الفیصل ہیں۔ ان کے علاوہ ناصر نے بعض کاروباری ، فنی اور کھیلوں کی شخصیات کی صورتوں کو بھی مجسمے کی شکل میں ڈھالا۔ ناصر کی خواہش ہے کہ وہ اپنی خداد داد صلاحیتوں کو عالمی سطح پر بھی منوائیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں