’عراق کے ایک ہسپتال کی حالت زار جہاں علاج کے لیے جانے سے بیمار رہنا بہتر ہے‘

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

عراق میں منظم بدعنوانی اور انتظامی مسائل کی وجہ سے محکمہ صحت ایک عرصے سے ابتری کا شکار ہے جس کی مثالیں اکا دکا منظرعام پرآتی رہتی ہیں۔

عراق کے سرکاری ہسپتالوں کی ابتری کو سوشل میڈیا پر وائرل ایک ویڈیو کلپ میں دیکھا جا سکتا ہے۔

ویڈیو پر صارفین کی طرف سےسخت رد عمل سامنے آیا ہے۔ صارفین کا کہنا ہے کہ یہ کیا یہ کوئی ہسپتال ہے جہاں مریضوں کا علاج ہوتا ہے یا ’زومبیوں‘ کی افزائش گاہ ہے۔

زومبی جنوبی افریقا کے ہیٹی اور جنوبی امریکا کے علاقوں میں ایک دیوتا کا درجہ رکھتا ہے جو ان کے پیروکاروں کے مطابق ویرانوں میں پایا جاتا ہے۔
یہ ویڈیو جنوبی عراق کے شہربصرہ میں الفیحاءکا ٹیچنگ ہسپتال ہے۔ ویڈیو میں اسپتال کے اندر کا منظردکھایا گیا۔ ہسپتال بری طرح زبوں حالی کا شکار اور گندگی سے اٹا پڑا ہے۔

صارفین کی طرف سے اس ہسپتال کی ویڈیو پر رد عمل میں استفسار کیا جا رہا ہے کہ محکمہ صحت کی طرف سے اتنے خطیر بجٹ کے باوجود ہسپتالوں کی یہ حالت زارکیوں ہے۔

خیال رہے کہ گذشتہ برس ایسا ہی ایک ویڈیو کلپ سامنے آیا تھا جس کے بعد وزیراعظم محمد شیاع السودانی نے اس کا نوٹس لیا تھا۔ انہوں نے ایک الکاظمیہ میں ایک ہسپتال کا دورہ کیا جس میں انہوں نے صحت کی سہولیات کو بہتر خدمات فراہم کرنے کا عزم کیا تھا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں