عدالتی منصوبے پر ووٹنگ ملتوی کی جائے: اسرائیلی وزیر دفاع کا مطالبہ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

اسرائیلی فضائیہ کے ایک ہزار سے زیادہ ریزرو اہلکاروں کے سروسز فراہم کرنے کے انکار کے بعد اسرائیلی وزیر دفاع یوو گیلنٹ نے متنازع عدالتی ترامیم پر ووٹنگ ملتوی کرنے کا مطالبہ کردیا۔ اسرائیل کے چینل 12 نے وزیر دفاع کے حوالے سے کہا کہ ملک میں عدالتی ترامیم کو روکنا ضروری ہے۔

یوو گیلنٹ نے عدالتی ترامیم کے خلاف احتجاج کرتے ہوئے سینکڑوں پائلٹوں اور ریزرو فوجیوں کی جانب سے سروسز کی فراہمی روکنے کے بعد کی اسرائیل کی صورتحال کو پریشان کن قرار دیا۔

اسرائیلی براڈکاسٹنگ کارپوریشن کے مطابق جمعہ کو اسرائیلی فضائیہ کے ایک ہزار 142 پائلٹوں اور ملازمین نے اپنی ریزرو سروس ختم کرنے کا اعلان کیا تھا۔

واضح رہے اسرائیلی وزیر اعظم نیتن یاہو نے جمعرات کو اعلان کیا تھا کہ عدالتی ترامیم کے متعلق ایک مسودہ قانون پر اتفاق رائے تک پہنچنے کی کوششیں جاری ہیں۔ اس مسودہ قانون کی اگلے ہفتے اسرائیلی پارلیمنٹ سے منظوری متوقع ہے۔ ان کے اس بیان نے اندرونی اور بیرونی طور پر احتجاج اور غصے کو جنم دیا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں