.

’برج الخلیفہ‘ آتش بازی کی روشن اسکرین میں تبدیل

لاکھوں افراد نے دبئی میں نئے سال کا استقبال رنگ اور نور سے کیا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

پوری دنیا کی طرح متحدہ عرب امارات میں بھی سال 2015ء کے استقبال کے لیے آتش بازی کا شاندار مظاہرہ کیا گیا۔ دبئی میں دنیا کی بلند ترین عمارت برج الخلیفہ اور اس کے آس پاس حسب روایت سال نو کی آتش بازی کی گئی اور فلک بوس عمار سال نو کے استقبال کے حوالے سے دنیا بھر کی سب سے روشن اسکرین بن کر سامنے آئی۔

العربیہ کے مطابق رات گئے سال نو کی پہلی شب کے موقع پر برج الخلیفہ میں آتش بازی کا پر مسرت اور دلفریب مظاہرہ دیکھنے کے لیے 15 لاکھ سے زائد افراد نے تقریب میں شرکت کی۔ برج الخلیفہ میں متحدہ عرب امارات اور امارت دبئی کی کامیابیوں کو آتش بازی کے مظاہرے میں پیش کرنے کی منفرد کوشش کی گئی۔ نیز آتش بازی کے مختلف رنگوں سے خلیجی ممالک کے درمیان وحدت کی علامت کے طور پر پیش کیا گیا۔

چین میں سال نو پر 35 ہلاک

چین میں بھی حسب معمول سال نو کے موقع پر آتش بازی کا مظاہرہ کیا گیا مگر اس وقت رنگ میں بھنگ پڑ گیا جب شنگھائی شہر میں سال نو کی تقریبات کے دوران بھگدڑ مچنے سے کم سےکم 35 افراد جاں بحق ہو گئے۔

چین کے’’ سی سی ٹی وی‘‘ ٹیلی ویژن نیٹ ورک کے انگریزی سیکشن کی رپورٹ کے مطابق بھگدڑ ساحلی شہر بوند میں اچانک پھیلی تاہم اس کی وجہ معلوم نہیں ہو سکی ہے۔

اُدھر جاپان کے دارالحکومت ٹوکیو میں بھی نئے سال کی آمد پر جشن منایا گیا۔ رات گئے ٹوکیو میں ٹوکیو ٹاور کے قریب دو ہزار افراد نے غبارے فضاء میں چھوڑ کر سال نو کا استقبال کیا۔ اس کے علاوہ میگی جنگو شہر کے معبد میں سال نو کے موقع پر تین ملین افراد کی آمد متوقع ہے۔

ملائیشیا میں فضاء سوگوار

ملائیشیا میں نئے سال کے استقبال کے موقع پر فضاء سوگوار رہی۔ چند روز قبل موسم کی خرابی کے باعث ’’ائیر ایشیا‘‘ کے ایک مسافر بردار طیارے کے حادثے میں 126 افراد کی موت کے بعد سال نو کے جشن کی تقریبات منسوخ کر دی گئی تھیں۔

افغانستان جیسے پسماندہ ملک میں بھی نئے سال کے استقبال کی تقریبات منائی جا رہی ہیں۔ افغانستان میں نیا سال افغان عوام کے لیے ایک نئی خوش خبری لے کر آیا ہے۔ اس سال امریکا اور اس کے اتحادی اپنا طویل ترین تیرہ سالہ جنگی مشن ختم کرنے جا رہے ہیں۔ رواں سال کے اختتام تک افغانستان میں سیکیورٹی کی تمام ذمہ داریاں افغان فوج کے حوالے کردی جائیں گی۔

یورپی شہر برلن میں کے برانڈ بورگ گیٹ پر سال نو کے استقبال کے حوالے سے ایک محفل موسیقی منعقدہ کی جا رہی ہے جس میں امریکی اداکار ڈیوڈ ھسلھوف خصوصی طور پر شرکت کریں گے۔ یاد رہے کہ یہ وہی جگہ ہے جہاں سنہ 1989ء میں مشرقی اور مغربی جرمنی کے درمیان قائم کی گئی دیوار فاصل کو گرا کر دونوں خطوں کو ملانے کی ایک یادگار تعمیر کی گئی تھی۔

یورپ کے دوسرے ملکوں فرانس، برطانیہ، میڈریڈ، یوکرائن سمیت جگہ جگہ سال نو کے استقبال کے لیے رنگا رنگ محافل کا انعقاد کیا جا رہا ہے۔ فرانس میں ماحول کو آلودگی سے بچانے کی مناسبت سے بصری آلات کی خصوصی نمائش کی جائے گی۔ میڈریڈ میں بویرٹا ڈیل سول میں ایک ملین افراد کے آتش بازی کی تقریب میں شرکت متوقع ہے۔

برطانیہ میں دریائے ٹیمز کے کنارے آتش بازی کا مظاہر کیا گیا تاہم اس سال وہاں پر سیکیورٹی کے سخت ترین انتظامات کیے گئے ہیں۔ ماضی میں بہت زیادہ ھجوم کے باعث وہاں بگدڑ بھی مچتی رہی ہے۔

امریکا اور مصر میں سال نو کا استقبال

امریکا میں سال نو کی مناسبت سے نیویارک کے ٹائمز اسکوائر میں مختلف رنگوں کی کرسٹل بال اتارنے کی روایتی تقریب سے استقبال کیا گیا۔ تقریب میں پاپ گلوکارہ ٹایلور سویفٹ سمیت اہم شخصیات نے شرکت کی۔

مصر کے سیاحتی شہروں اسکندریہ اور شرم الشیخ میں متنوع نوعیت کی سرگرمیوں سے سال نو کا استقبال کیا گیا۔ شرم الشیخ میں رویتی اونٹ سواری اور محافل موسیقی کا اہتمام کیا گیا جن میں ملک کے نامور گلوکاروں اور فنکاروں نے شرکت کی۔