.
حج وعمرہ

جمرات پُل حجاج کرام کے استقبال کے لیے تیار

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

چار ارب اور بیس کروڑ ریال کے خطیر بجٹ سے تعمیر ہونے والے جمرات پل حجاج کرام کے استقبال کے لیے تیار کرلیا گیا ہے۔

چھ منزلہ یہ پل لاکھوں حجاج کرام کا استقبال کرے گا۔ جمرات پل کی ہرایک منزل 12 میٹر بلند ہے اور ایک گھنٹے میں ایک لاکھ 20 ہزار حجاج کرام رمی جمرات کرسکیں گےجب کہ ایک وقت میں مجموعی طور پر 5 لاکھ حجاج کرام رمی جمرات کریں گے۔

رمی جمرات کے لیے تیار کردہ پل کے استقبال کی تیاریاں مکمل کرلی گئی ہیں۔ ایام تشرق، عید کے پہلے روز اور تین تک رمی جمرات کے مناسک ادا کیے جائیں گے۔

جمرات پل چھ عمارتوں پہر مشتمل ہےایک بارہ منزلہ عمارت ہے۔ان میں دو عمارتوں میں ایک رن وے ہے۔ ایک سے دوسری منزل کےدرمیان ایمبولینس سروس کی سہولت ہے اور ان میں تین الیکٹرک اسٹیشن ہیں جب کہ ایک ریزرو الیکٹرک اسٹشن بھی اس کا حصہ ہے۔

جمرات پل کی 11 سیڑیاں ہیں۔ ان میں سے حجاج کی منتقلی کے لیے چار عمارتیں، باہر نکلنے کےلیے سات راستےہیں۔ ہرعمارت میں برقی زینے ہیں جن کی تعداد 28 ہے۔

ایسکیلیٹرس (BMS) عمارت کے انتظام کے نظام سے منسلک ہیں۔ اس پل کے ارد گرد ایسکلیٹرز ہیں جن کی تعداد20 جب کہ کل سیڑھیوں کی تعداد 328 ہے۔

اس پل میں (13) سسٹم شامل ہیں ، جن میں کلوز سرکٹ نگرانی کا نظام ہے۔اس میں 900 کیمرے ہیں 4 ٹی وی چینلز کے لئے ٹی وی نشریاتی نظام ، رہنمائی پیغامات کا نظام ، 90 کیمروں پر مشتمل الیکٹرانک سسٹم، عوامی اعلانات مشتمل ہے۔ 3000 سے زیادہ بھاری اسپیکر ، بی ایم ایس اور سکاڈا ، بلاتعطل پاور سسٹم (یو پی ایس)۔ فائر الارم سسٹم ، آگ بجھانے والا نظام ، ویسٹ ڈسپوزل سسٹم ، ٹنل گارڈ سسٹم ، کاربن مونو آکسائیڈ لیٹر میٹرنگ سسٹم اور مرئیت کی سطح کی پیمائش کا نظام اور226 ماحول دوست الیکٹرک گاڑیاں جو جمرات پل کاحصہ ہیں۔

جمرات بُرج میں 456 ایئر کنڈیشنر،78 وسطی ایئرکنڈیشنر ، 182 الگ الگ یونٹ والے 104 واٹر پمپ شامل ہیں۔

جمرات برج الشعیبین سے تیسری منزل تک 4 سرنگوں سے منسلک ہے جن کی کل لمبائی 3،485 میٹر ہے۔ حجاج کو لے جانے کے لیے46 برقی واک ویز اور 4 برقی اسٹیشنوں پر مشتمل ہے ، جو ایک SCADA نظام کے ساتھ ریموٹ کنٹرول سسٹم سے منسلک ہیں۔