آب زم زم کے 55 ملین گیلن کی تیاری کا شاہ عبداللہ پروجیکٹ مکمل

حجاج کی سہولت کے لیے پانچ لیٹر آب زمزم کی بوتلیں تیار

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

سعودی عرب کی نیشنل واٹرسپلائی کمپنی کے زیرانتظام شاہ عبداللہ بن عبدالعزیز فراہمی آب زم زم کا تین سال سے جاری منصوبہ گذشتہ ماہ [ستمبر] میں مکمل ہوچکا ہے۔ منصوبے کے مطابق حجاج کرام اور زائرین و معتمرین کے لیے پانچ لیٹر آب زم زم پرمشتمل 55 ملین بوتلیں تیارکی گئی ہیں۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق واٹرسپلائی کمپنی کی جانب سے جاری ایک بیان میں بتایا گیا ہے کہ مسجد حرام اور مسجد نبوی میں زائرین کو پیش کرنے کے لیے آب زم زم کی خصوصی بوتلوں کی تیاری کا کام رواں سال کے آغاز میں تیز کردیا گیا تھا۔ منصوبے کے مطابق اسے رواں موسم حج سے پہلے ہی پایہ تکمیل کو پہنچانا تھا اور منصوبہ اپنے مقررہ وقت ہی پرمکمل ہوچکا ہے، جس کے بعد حجاج کرام و معتمرین کو آب زمزم کی فراہمی زیادہ بہتر طریقے سے جاری ہے۔

بیان میں بتایا گیا ہے کہ حکومت یومیہ آب زم زم کی فراہمی کی مقدار کو پچاس فی صد بڑھانا چاہتی تھی۔ اس کے علاوہ زم زم کو زیادہ بہترطریقے سے محفوظ بنانے، چوبیس گھنٹے کی بنیاد پر زائرین کو فراہم کرنے اور زیادہ مقدار میں خریدنے والوں کے آرڈر کے مطابق جدید سائنٹیفیک طریقے سے پیکنگ کرنے کے انتظامات کیے گئے ہیں۔

حکومت جلد ہی مختلف ہوائی اڈوں اور بندرگاہوں سمیت بیرون ملک آمدو رفت کے تمام اہم مقامات پر بھی زم زم کی زیادہ سے زیادہ مقدار ذخیرہ کرے گی تاکہ اپنے اپنے ملکوں کو واپس جانے والے حجاج و معتمرین اپنی مرضی کے مطابق زمزم خرید کرسکیں۔

خیال رہے کہ سعودی واٹرسپلائی کمپنی نے تین سال کی محنت شاقہ سے آب زم زم کو بوتلوں میں پیک کرنے کا ایک منظم منصوبہ مکمل کیا ہے۔ تین سال کے دوران اس پروجیکٹ پر چھے ہزار افراد کام کرتے رہے ہیں۔ گویا ایک منٹ میں پانچ افراد اس منصوبے پر کام کرچکے ہیں۔ منصوبے کی تکمیل کے بعد یومیہ پانچ لیٹر آب زم زم کی 50 ہزار بوتلیں فروخت ہو رہی ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں