.

چین کو روکنے امریکی فوج کی بڑی تعداد ویتنام پہنچ گئی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

ویتنام کے خلاف امریکی جنگ کے خاتمے کے بعد پہلی بار امریکی بحریہ کا طیارہ بردار بیڑا اور بڑی تعداد میں فوجیوں کو لے کر ویتنام کی بندرگاہ پر لنگرانداز ہوا ہے۔ امریکی فوج کی آمد کا مقصد جنوبی چین میں سمندری حدود میں چین کی توسیع پسندی کی روک تھام کرنا ہے۔

خبر رساں اداروں کے مطابق امریکی بحری بیڑہ ’یو ایس ایس کارل فینسن‘ چھ ہزار فوجیوں کو لے کر ویتنام کے ساحلی شہر دانانگ میں پہنچا ہے۔ یہ ویتنام جنگ کے خاتمے کے بعد امریکی فوج کی پہلی بڑی تعداد کی آمد ہے۔ اس سے قبل سنہ 1975ء میں جنوب مشرقی ایشیا میں واقع اس ملک میں بڑی تعداد میں امریکی فوج موجود تھی۔

امریکی فوج کی بڑی تعداد ایک ایسے وقت میں ویت نام پہنچی ہے جب جزائر باراسیل اور سات دیگر صنعتی جزیروں میں چین اپنی فوج جمع کررہا ہے۔ یہ جزائر اس علاقے میں وقع ہیں جس پر ویتنام اپنی ملکیت کا دعویٰ کرتا ہے۔

چین اپنے جنوبی ساحلی علاقے سے متصل سمندر کے وسیع علاقے پرقبضے کے لیے کوشاں ہے۔ اس حوالے سے چین نے پڑوسی ملکوں اور عالمی برادری کی تنقید کو بھی مسترد کردیا ہے۔