.

متحدہ عرب امارات کے دو خلانورد بین الاقوامی خلائی اسٹیشن پر بھیجنے کے لیے نامزد

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

حاکمِ دبئی شیخ محمد بن راشد آل مکتوم نے متحدہ عرب امارات کے دو خلانوردوں کو بین الاقوامی خلائی اسٹیشن پر بھیجنے کا ا علان کیا ہے ۔

ان دونوں خلانوردوں کے نام ہزاع علی المنصوری اور سلطان علی النیادی ہیں۔وہ دونوں عرب د نیا کے پہلے خلانورد ہیں جنھیں رہنے کے قابل خلائی سیارے میں بھیجا جارہا ہے۔ان کا انتخاب 4022 درخواست گزاروں میں سے کیا گیا ہے۔

شیخ محمد بن راشد نے سوموار کو ایک ٹویٹ میں ان کی نامزدگی کی اطلاع دیتے ہوئے کہا ہے کہ’’ ہزاع اور سلطان تمام عربوں کے نمائندہ ہیں اور وہ یو اے ای کی بلند امنگوں کے بھی ترجمان ہیں۔امارات کے تمام نوجوان اور عوام مبارک باد قبول فرمائیں‘‘۔

وہ ایک اور ٹویٹ میں لکھتے ہیں:’’ خطے میں صرف ہم ہی مریخ تک جانے کا پروگرام ، سیٹلائٹ کی تیاری اور چلانے کی مکمل صلاحیت اور خلائی شعبے میں 20 ارب درہم کی سرمایہ کاری سے خلائی پروگرام رکھتے ہیں۔اس کا راز نوجوان عرب لوگ اور ان کی صلاحیتیں ہیں ‘‘۔

ابو ظبی کے ولی عہد شیخ محمد بن زاید آل نہیان نے بھی ان دونوں خلانوردوں کو مبارک باد دی ہے۔انھوں نے ایک ٹویٹ میں لکھا ہے کہ ’’ جس طرح خلا کی کوئی حدود نہیں ،اسی طرح ہماری وطن کے لیے مزید کامیابیوں کی خواہشات کی کوئی حدود نہیں ہیں۔ ہمیں اپنے نوجوانوں پر بھرپور اعتماد ہے کہ وہ جدت ، کامیابی اور بالادستی کا پرچم بلند رکھیں گے‘‘۔

بین الاقوامی خلائی اسٹیشن زمین کے قریب ترین مدار میں واقع ہے اورا س کو زمین سے کھلی آنکھوں سے دیکھا جاسکتا ہے۔اس کے پہلے حصے کو مدار میں 1998ء میں چھوڑا گیا تھا۔اس کی تعمیر وترقی کا عمل جاری ہے ۔اس کے بعض حصوں کو اس سال اور بعض کو 2019ء میں چھوڑا جائے گا۔