.

طرابلس آپریشن میں 28 لیبی فوجی ہلاک، 92 زخمی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

لیبیا کی سرکاری فوج کے ترجمان میجر جنرل احمد المسماری نے کہا ہے کہ دارالحکومت طرابلس میں شدت پسندوں کے خلاف جاری آپریشن میں 28 فوجی ہلاک اور 92 زخمی ہوئےہیں۔

العربیہ کےمطابق ایک پریس کانفرنس سے خطاب میں ترجمان نے کہا کہ طرابلس آپریشن کو کامیاب بنانےکے لیے فوج کو ہرطرح کی سہولیات اور ضروری سامان فراہم کیا جائے گا۔

ایک سوال کے جواب میں جنرل المسماری کا کہنا تھا کہ طرابلس لڑائی میں کسی فوجی کے لاپتا یا گرفتار ہونے کا کوئی واقعہ پیش نہیں آیا۔

انہوں‌نے طرابلس کی قومی وفاق حکومت کی طرف سے بعض فوجیوں کی گرفتاری کی خبردوں کی تردید کی۔

ایک سوال کے جواب میں انہوں‌نے کہا کہ لڑائی میں 28 لیبی فوجی ہلاک اور 92زخمی ہوئے۔ ان میں سے 25 کو علاج کے بعد اسپتالوں سے نکال دیاگیا ہے جب کہ 5 انتہائی نگہداشت وارڈ میں زیرعلاج ہیں۔

لیبی فوج نے طرابلس ہوائی اڈے کا کنٹرول مکمل طورپر اسنبھالنے کے بعد ہوائی اڈے پر موجود بعض عناصر کو حراست میں لےلیا ہے۔

ترجمان نے کہا کہ مصراتۃ کے ہوائی اڈے سے اڑنے والے طیاروں‌نے الغریانی کے مقام پر تین فضائی حملے کیے ہیں۔

خیال رہے کہ لیبی فوج دارالحکومت طرابلس میں داعش اور القاعدہ سے منسلک شدت پسند گروپوں کے خلاف برسرپیکار ہے۔