لندن: مسلح پولیس نےچاقو حملے کے بعد مشتبہ شخص کو گولی مارکر موت کی نیند سلا دیا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size

برطانیہ کے دارالحکومت لندن میں مسلح پولیس نے ایک مشتبہ شخص کو گولی مار کر موت کی نیند سلا دیا ہے۔پولیس کا کہنا ہے کہ لندن کے جنوبی علاقے اسٹریتھم میں چاقو گھونپنے کے واقعے کے بعد اس مشتبہ شخص کو گولی ماری گئی ہے۔اس نے خودکش حملے میں استعمال ہونے والی ایک جعلی جیکٹ پہن رکھی تھی۔

لندن میٹرو پولیٹن پولیس نے چاقوحملے کو دہشت گردی قراردیا ہے۔یہ واقعہ اتوار کی دوپہر دو بجے کے قریب پیش آیا ہے۔اس نے ٹویٹر پر یہ اطلاع دی ہے:’’اس مرحلے پر یہ یقین کیا جاتا ہے کہ متعدد افراد پر چاقو کےوار کیے گئے ہیں۔ فی الوقت حالات کا جائزہ لیا جارہا ہے۔‘‘

لندن کے میئر صادق خان نے ایک بیان میں اسٹریتھم میں ایک شاہراہ پر فائرنگ اور چاقو حملے کے اس واقعہ کی تصدیق کی ہے۔انھوں نے بھی کہا ہے کہ یہ واقعہ دہشت گردی کا شاخسانہ ہے۔

برطانوی پولیس نے بعد میں یہ اطلاع دی ہے کہ دہشت گردی کے اس مشتبہ واقعہ میں دو افراد زخمی ہوئے ہیں لیکن اس نے ان کی حالت کے بارے میں کچھ نہیں بتایا ہے اور کہا ہے کہ ’’ہم ان کی تازہ صورت حال کے بارے میں جاننے کے منتظر ہیں۔جائے وقوعہ پر مکمل کنٹرول حاصل کر لیا گیا ہے۔‘‘

بعض عینی شاہدین نے واقعے کی تصاویر آن لائن پوسٹ کی ہیں۔ان کا کہنا ہے کہ چاقو کے وار سے ایک شخص کو گہرے زخم آئے ہیں اور اس کی حالت تشویش ناک ہے۔ایک عینی شاہد کا کہنا ہے کہ اس نے جائے وقوعہ پر تین گولیاں چلنے کی آوازیں سنی ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں