.

فیلڈ مارشل طنطاوی کی وفات پرمصری ٹی وی پیش کاروں نے سیاہ کپڑے کیوں پہنے؟

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

مصر کے سابق فیلڈ مارشل محمد حسین طنطاوی کی وفات کے اعلان کے بعد مصری ٹیلی ویژن پر صبح کے پروگراموں کے پیش کاروں اور نیوز اینکروں نے سیاہ لباس زیب تن کرکے اس خبر کی کوریج کی۔

فیلڈ مارشل جنرل حسین طنطاوی سنہ 2011ء کے انقلاب کے بعد ملک کے وزیر دفاع اور ملٹری کونسل کے سربراہ مقرر ہوئے تھے۔

ٹی وی پروگراموں کے آغاز میں میزبان عام کپڑوں میں نمودار ہوئے۔ فیلڈ مارشل طنطاوی کی موت کے اعلان کے بعد انہوں نے کچھ دیر کے لیے لباس تبدیل کیے اور سیاہ کپڑے پہن کر پروگرام مکمل کیے۔ لباس تبدیل کرنے اور سیاہ لباس پہننے کا مقصد فیلڈ مارشل کی وفات پر سوگ منانا تھا۔

دوسری جانب مصری ایوان صدر کے ترجمان سفیر بسام راضی نے فیلڈ مارشل طنطاوی کی موت پر تین روزہ سوگ کا اعلان کیا ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ منگل سے جمعرات تک ملک میں سوگ رہے گا اور قومی پرچم سرنگوں رہے گا۔

السیسی کی طرف سے تعزیت

مصری صدر عبدالفتاح السیسی نے فیلڈ مارشل حیسن طنطاوی کی وفات پر گہرے دکھ اور افسوس کا اظہار کیا۔ اپنے فیس بک کے آفیشل پیج پرانہوں نے لکھا کہ آج میں نے ایک باپ ، ایک استاد اور ایک عظیم شخص کو کھو دیا جو اپنے وطن سے ٹوٹ کر محبت کرتا تھا۔ میں نےملک کی خدمت کے لیے لگن محنت اور بہت کچھ اس سے سیکھا تھا۔

انہوں نے مزید کہا کہ فیلڈ مارشل طنطاوی نے انتہائی سنگین مشکلات حالات میں مصر کو درپیش خطرات کا ڈٹ کر مقابلہ کیا۔

السیسی نے کہا کہ میں فیلڈ مارشل طنطاوی کواچھی طرح جانتا ہوں۔ وہ مصر اور اس کے لوگوں سے پیار کرنے والا اور وفادار فوجی افسر تھا۔ فیلڈ مارشل محمد حسین طنطاوی کی وفات پران کے خاندان اور پوری قوم سے افسوس اور تعزیت کرتا ہوں۔

درایں اثنا مصری ایوان صدر نے مرحوم فیلڈ مارشل کی وفات پر ایک تعزیتی بیان میں مرحوم کی خدمات کو شاندار الفاظ میں خراج عقیدت پیش کیا گیا ہے۔ بیان میں کہا گیا ہے کہ مرحوم نےنصف صدی سے زاید عرصے تک اپنے ملک اور قوم کے لیے خدمات انجام دیں۔

مصر کی سب سے بڑی دینی درس گاہ جامعہ الازھر نے بھی فیلڈ مارشل طنطاوی کی وفات پر افسوس کا اظہار کیا ہے۔

خیال رہے کہ فیلڈ مارشل اور سابق مصری وزیر دفاع محمد حسین طنطاوی کل منگل کےروز 85 سال کی عمر میں انتقال کرگئے تھے۔