برازیلین لیجنڈ فٹ بالر پیلے 82 سال کی عمر میں انتقال کر گئے

1281 گول کرنے کا عالمی ریکارڈ قائم کیا، ایک ماہ سے آنت کے کینسر کا علاج چل رہا تھا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

برازیل کے عالمی فٹ بال کے لیجنڈ اور فٹ بال کی دنیا میں انقلاب برپا کرنے والے باصلاحیت سٹرائیکر پیلے جمعرات کو 82 سال کی عمر میں انتقال کر گئے۔

پیلے کی بیٹی کیلی نسیمینٹو نے انسٹاگرام پر البرٹ آئن سٹائن ہسپتال جہاں ان کے والد کا ایک ماہ سے کینسر کا علاج چل رہا تھا سے لکھا "ہم آپ کا شکریہ ادا کرتے ہیں، ہم آپ سے بے حد پیار کرتے ہیں، سکون سے آرام کریں۔"

پیلے تین بار ورلڈ کپ جیتنے والے دنیا کے واحد کھلاڑی ہیں، انہوں نے 1958، 1962 اور 1970 کے ورلڈ کپ جیتے تھے۔ انہیں 1999 میں انٹرنیشنل اولمپک کمیٹی نے پچھلی صدی کے بہترین کھلاڑی کے طور پر چنا تھا ۔ اور ایک سال بعد فیفا نے انہیں صدی کے بہترین کھلاڑی قرار دیا تھا۔

کچھ روز قبل قطر 2022 ورلڈ کپ کے کوارٹر فائنل میں برازیل کو کروشیا کے ہاتھوں شکست ہوئی تھی اور اب کچھ روز بعد برازیل لیجنڈ فٹ بالر کی موت کی خبر سامنے آگئی ہے۔

برازیل کے سربیا کے خلاف پہلے میچ کے دن پلے کے آفیشل سوشل میڈیا اکاؤنٹ پر پوسٹ کی گئی تھی ۔ "کپ گھر لے آؤ!"۔

پیلے اپنی آخری جنگ ستمبر 2021 میں معمول کے چیک اپ کے دوران دریافت ہونے والے بڑی آنت کے کینسر سے ہار گئے ۔

دنیا بھر کے افراد کی بڑی تعداد پیلے کا سب سے بڑا فٹ بالر تصور کرتی ہے۔

پیلے نے 1956 سے لیکر 1974 کے درمیان سینڈوس کلب کے رنگوں کے تحت 1363 میچوں میں 1281 گول کر عالمی ریکارڈ قائم کیا تھا۔

پیلے 1.72 میٹر کے اپنے معمولی قد کے باوجود بے مثال ایتھیلیٹ تھے اور اپنی غیر معمولی تکنیک کے ساتھ جدید فٹ بال کے علمبردار سمجھے جاتے تھے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں