ترکیہ : زلزلہ میں منہدم عمارتوں کے مالکان کے سفر پر پابندی

مالکان سے تعمیر میں برتی گئی غفلت کی تحقیقات کی جائیں گی: وزیر انصاف، تاریخ کی سب سے بڑی ہاؤسنگ مہم کی تیاری ہے: وزیر ماحولیات

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

ترکیہ کے وزیر انصاف نے اس عزم کا اظہار کیا کہ وہ پیر کے روز زلزلہ میں منہدم ہو جانے والی عمارتوں کے مالکان سے تحقیقات کریں گے۔ اس بنا پر ان مالکان کو سفر کرنے سے روک دیا گیا ہے۔

ترک عہدیدار نے کہا کہ زلزلے میں عمارتوں کے منہدم ہونے کا باعث بننے والی غفلت کے تمام معاملات کی تحقیقات کی جائیں گی۔ ان املاک کے مالکان کو ملک چھوڑنے سے روکنے کے لیے تمام ضروری قانونی اقدامات کیے گئے ہیں۔ زلزلہ زدگان کے لیے پناہ گاہوں کے متعلق گفتگو کرتے ہوئے ترک وزیر انصاف نے کہا کہ ہمارے پاس عارضی مراکز ہیں جن میں لگ بھگ ایک لاکھ 92 ہزار افراد رہائش پذیر ہیں۔

ترکی کے وزیر ماحولیات و شہری ترقی مرات کورم نے اعلان کیا کہ حکومت زلزلے سے متاثرہ 10 ریاستوں میں اپنی تاریخ کی سب سے بڑی ہاؤسنگ مہم شروع کرنے کی تیاری کر رہی ہے۔ یہ بات جمعہ کے روز ریاست غازی عنتاب میں آفات اور ایمرجنسی مینجمنٹ کے رابطہ مرکز میں منعقدہ ایک پریس کانفرنس میں کی گئی۔ ترک وزیر نے بتایا کہ متاثرہ علاقوں میں منہدم یا شدید نقصان پہنچانے والی عمارتوں کی تعداد 12 ہزار 141 ہے ۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں