ایران کے ناظم الامورسوڈان سے ایرانیوں کے انخلا پرسعودی عرب کے شکرگزار

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

سعودی عرب میں تعینات ایران کے ناظم الامور نے جدہ میں شاہ عبداللہ ایئربیس پرسوڈان سے نکال کرلائے گئے دسیوں ایرانی شہریوں کاخیرمقدم کیا ہے اوران کے انخلا میں مدد دینے پرسعودی عرب کا شکریہ ادا کیا ہے۔

ایرانی ناظم الامورحسن زرانگارکا ہوائی اڈے آمد پر سعودی عرب کے مغربی خطے کے کمانڈرمیجر جنرل پائلٹ احمد الدیبس اورایئربیس کے کمانڈر میجر جنرل عبداللہ الزہرانی نے پرتپاک استقبال کیا۔

سعودی عرب کے الاخباریہ ٹی وی کو دیے گئے ایک انٹرویو میں زرانگار نے سعودی قیادت کا شکریہ ادا کیا اور سوڈان سے ایرانی شہریوں کو نکالنے میں مدددینےپرسعودی حکومت کی کوششوں کی تعریف کی۔

سعودی وزارت خارجہ کے مطابق ایرانیوں سمیت 1800 سے زیادہ غیرملکی شہریوں کو ہفتے کے روز سعودی بحری جہاز’’امانہ‘‘کے ذریعے سوڈان سے نکالا گیا۔ اسی روزایک ایرانی طیارہ سعودی عرب میں لائے گئے65 افراد کو ایران لے جانے کے لیے شاہ عبداللہ ایئربیس پہنچا تھا۔

سعودی وزارت خارجہ کا کہنا ہے کہ سوڈان میں دوہفتے قبل بحران شروع ہونے کے بعد سے اب تک مملکت کی انخلا کی کارروائیوں کے نتیجے میں5,197 افراد کو جدہ یا دوسرے شہروں میں منتقل کیاگیا ہے۔ان میں 184 سعودی شہری بھی شامل ہیں۔

سوڈان کے آرمی چیف جنرل عبدالفتاح البرہان کی وفادار فورسز اوران کے حریف کمانڈر محمد حمدان دقلو المعروف حمیدتی کے زیرکمان سریع الحرکت فورسز(آر ایس ایف) کے درمیان 15 اپریل سے جھڑپیں جاری ہیں۔اس دوران میں بیرونی ممالک خرطوم سے اپنے ہزاروں شہریوں کو نکالنے کے لیے جدوجہد کررہے ہیں۔ متحارب فورسز کے درمیان مسلح تشدد کے نتیجے میں 500 سے زیادہ افراد ہلاک اور ہزاروں زخمی ہوچکے ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں