امریکہ: سکول ٹیچر کو گولی مارنے والے بچے کی ماں کا غیر قانونی بندوق رکھنے کا اعتراف

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

امریکہ میں جنوری میں ایک سکول میں خاتون ٹیچر کو گولی مارنے والے بچے کی ماں نے غیر قانونی طور پر بندوق رکھنے کے جرم کا اعتراف کرلیا۔ وفاقی استغاثہ نے بتایا کہ امریکی ماں ڈیجا ٹیلر، جس کے چھ سالہ بچے نے اپنی استاد کو 6 جنوری کو گولی مار کر زخمی کردیا تھا، نے غیر قانونی اسلحہ رکھنے کا اعتراف کرلیا ہے۔

یہ واقعہ ریاست ورجینیا کے سکول میں پیش آیا تھا۔ ٹیچر کے ہاتھ اور سینے میں زخم آیا تھا اور وہ دو ہفتے ہسپتال داخل رہی تھی۔ وفاقی استغاثہ نے بتایا کہ ڈیجا ٹیلر کو اس جرم پر ممکنہ طور پر 25 سال قید ہو سکتی ہے۔

ڈیجا ٹیلر کا ٹیسٹ کیا گیا تو معلوم ہوا تھا کہ اس نے منشیات کا استعمال نہیں کیا۔ تاہم ایجنٹوں نے ڈیجا ٹیلر کی والدہ کے گھر سے تقریباً 24.5 گرام چرس، گانجہ کھانے کے قابل پیکیجنگ اور چرس کا سامان بھی برآمد کیا تھا۔

ٹیلر کے اہل خانہ نے فائرنگ کے فوراً بعد ایک بیان میں کہا تھا کہ اس کا بیٹا شدید معذوری کا شکار ہے اور یہ کہ بندوق گھر میں محفوظ تھی۔ امریکہ میں 40 کروڑ بندوقیں گردش میں ہیں اور سکولوں میں فائرنگ کے واقعات سامنے آتے رہتے ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں