چینی ہیکرز نے امریکی سفیر کی ای میل آئی ڈی ہیک کر لی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

امریکی اخبار ’وال اسٹریٹ جرنل‘ نے جمعرات کو رپورٹ کیا کہ بیجنگ سے منسلک ہیکرز نے جاسوسی کی کارروائی میں چین میں امریکی سفیر نکولس برنز کے ای میل اکاؤنٹ کو ہیک کیا ہے۔ اس کے بارے میں خیال کیا جاتا ہے کہ اس ای میل میں کم از کم سیکڑوں ہزاروں امریکی حکومت کی ای میلز شامل ہوں۔

اخبار نے اپنی رپورٹ میں باخبر ذرائع کے حوالے سے کہا ہے کہ اسسٹنٹ سیکرٹری آف سٹیٹ برائے مشرقی ایشیائی امور ڈینیل کریٹن برنک کا اکاؤنٹ بھی جاسوسی کی وسیع کارروائی میں ہیک کر لیا گیا تھا جس کا اعلان مائیکرو سافٹ نے رواں ماہ کے آغاز میں کیا تھا۔

جب سفارت کاروں کے اکاؤنٹس ہیک ہونے کے بارے میں پوچھا گیا تو وزارت خارجہ نے کوئی تفصیلات بتانے سے انکار کیا اور کہا کہ وہ جاسوسی کی کارروائی کی تحقیقات کر رہی ہے۔

چین کی تردید

برنز اور کریٹن برنک کے ساتھ ساتھ امریکی وزیر تجارت جینا رائمنڈو جاسوسی مہم کا واحد شکار ہیں جن کے خلاف سائبر حملہ سامنے آیا۔ اس مہم کے بعد واشنگٹن میں اعلیٰ سفارت کار نے اپنے چینی ہم منصب کو متنبہ کیا۔

واشنگٹن میں چینی سفارت خانے کے ترجمان لیو بِنگیو نے رائیٹرز کو ایک ای میل میں جواب دیتے ہوئے کہا کہ "چین ہر قسم کے سائبر حملوں اور چوریوں کی سختی سے مخالفت کرتا ہے اور ان کا مقابلہ کرتا ہے۔ یہ موقف مستقل اور واضح ہے۔"

انہوں نے مزید کہا کہ سائبر حملوں کے ماخذ کی نشاندہی کرنا ایک پیچیدہ تکنیکی مسئلہ ہے۔ ہم امید کرتے ہیں کہ متعلقہ فریق بے بنیاد قیاس آرائیاں اور الزامات لگانے کے بجائے پیشہ ورانہ اور ذمہ دارانہ رویہ اپنائیں گے۔

مائیکروسافٹ نے گذشتہ ہفتے کہا تھا کہ چینی ہیکرز نے اس کی ایک ڈیجیٹل چابیاں چرا لی ہیں اور اس کے کوڈ میں خامی کا فائدہ اٹھا کر امریکی حکومتی ایجنسیوں اور دیگر صارفین کی ای میلز چوری کر لی ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں