میں نے انتقام لے لیا: مصر میں 15 سالہ لڑکی نے والد کو جلا کے مار ڈالا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

مصر میں ایک انسانیت سوز واقعے میں ایک 15 سالہ لڑکی نے گھریلو ناچاقی پر اپنے والد کو زندہ جلا کر مار ڈالا۔

یہ دل دہلا دینے والا واقعہ جیزہ کے جنوب میں واقع عاطفیہ سینٹر میں پیش آیا۔لڑکی نے واقعہ کی تفصیلات بیان کرتے ہوئے تفتیشی حکام کو بتایا کہ "میرے والد ہمیشہ میری والدہ سے جھگڑا کرتے تھے، اس لیے میں ان سے جان چھڑانے کا فیصلہ کیا۔"

مصری اخبار الیوم کے مطابق ، لڑکی نے پہلے گیس کی سپلائی کھولی اور جیسے ہی والد نے "سگریٹ" سلگانے کے لیے ماچس جلائی تو سلنڈر پھٹ گیا اور آگ لگ گئی۔ آگ سے جھلسنے پر اسے ہسپتال لے جایا گیا، جہاں وہ جانبر نہ ہوسکا۔

لڑکی کو گرفتار کر کے سوشل کیئر ہوم میں رکھا گیا کیونکہ وہ قانونی عمر سے کم ہے۔

لڑکی نے بیان میں کہا کہ اس کے والد نے جھگڑے کے بعد اس کی ماں کو گھر سے نکال دیا، تھا کیونکہ وہ منشیات کا عادی تھا اور اسے خریدنے کے لیے گھر پر خرچ نہیں کرتا تھا اور مار پیٹ کرتا تھا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں