داعش نے روس میں فائرنگ کرنے والے مبینہ حملہ آوروں کی تصویر جاری کر دی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

عسکریت پسند گروپ داعش کی عماق نیوز ایجنسی نے ٹیلی گرام پر بتایا کہ داعش نے ہفتے کے روز ایک تصویر جاری کی جس کے بارے میں کہا گیا ہے کہ یہ وہ چار حملہ آور تھے جو جمعہ کو ماسکو کے قریب ایک کنسرٹ ہال میں فائرنگ کے ہنگامے کے پیچھے تھے جس میں کم از کم 143 افراد ہلاک ہو گئے تھے۔

عماق نے سکیورٹی ذرائع کا حوالہ دیتے ہوئے ایک بیان میں مزید کہا کہ یہ حملہ [داعش] اور اسلام سے لڑنے والے ممالک کے درمیان جاری جنگ کے تناظر میں ہوا ہے۔

داعش نے اس حملے کی ذمہ داری قبول کی لیکن ایسے اشارے ملے تھے کہ روس اس سانحے کے یوکرین سے تعلق کی تلاش میں تھا حالانکہ یوکرینی حکام نے اس بات کی سخت تردید کرتے ہوئے کہا ہے کہ کیف کا اس سے کوئی تعلق نہیں ہے۔

روسی حکام نے ہفتے کے روز کہا کہ انہوں نے حملے کے سلسلے میں چار مشتبہ مسلح افراد سمیت 11 کو گرفتار کیا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں