.

یمن: حوثی علاقے میں بم دھماکہ، ایک عمارت نشانہ بنی

حوثیوں کو نشانہ بنانے کے لیے القاعدہ کی پے درپے کارروائیاں

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

یمنی دارالحکومت کے حوثی اکثریتی علاقے میں بم دھماکہ ہوا ہے۔ پیر کے روز کیے جانے والے اس بم دھماکے میں فی الحال جانی نقصان کی مصدقہ اطلاعات کا انتظار ہے، تاہم یہ معلوم ہوا ہے کہ اس دھماکے کا ہدف حوثی علاقہ تھا۔

حوثی یمن میں وسیع علاقے پر قابض ہیں۔ القاعدہ کے سنی عسکریت پسندوں کے ساتھ ان کا تصادم کسی نہ کسی جگہ سامنے آتا رہتا ہے۔ دھماکے کے فوری بعد علاقے کو جانے والے راستے بلاک کر دیے گئے ہیں اور مسلح اہلکاروں نے پوزیشنیں سنبھال لی ہے۔

عینی شاہدین کے مطابق اس دھماکے سے ایک عمارت کی دیوار میں بڑا سا شگاف پڑ گیا ہے۔ جبکہ سوشل میڈیا پر اس عمارت کی ایسی تصاویر پیش کی گئی ہیں جن میں عمارت کے سامنے والے حصے کی کھڑکیاں وغیرہ اڑ گئی ہیں اور دروازے کے نزدیک سے اینٹیں بھی غاٗئب ہیں۔

واضح رہے یمن میں جاری بحران میں شدت اس وقت آئی تھی جب حوثیوں نے دارالحکومت میں میں قبضہ کر کے اہم عمارتوں کا کنٹرول حاصل کر لیا تھا۔ بعد ازاں حوثیوں کا اثر رسوخ ملک کے وسطی اور مغربی حصوں تک پھیل گیا۔

حالیہ ہفتوں میں القاعدہ سے وابستہ عسکریتوں نے متعدد بار حوثی اہداف کو نشانہ بناتے ہوئے کئی بم دھماکے کیے ہیں۔ ایسی ہی کارروائیوں کے دوران اتوار کے روز ایک گیسٹ ہاوس میں چار افراد ہلاک ہوئے ہیں جبکہ بدھ کے روز چھبیس افراد ہلاک ہو گئے تھے۔