نصر اللہ کا اسرائیل کے خلاف جنگ میں "کئی ملیشیاؤں" کی شرکت کا اعلان

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

لبنانی تنظیم حزب اللہ کے سکریٹری جنرل حسن نصر اللہ نے دھمکی دی ہے کہ اگر اسرائیل نے لبنان یا شام کے خلاف جنگ چھیڑی تو صہیونی ریاست کے خلاف جنگ میں متعدد ممالک کے ہزاروں جنگجو شریک ہوں گے۔

حسن نصر اللہ کے بیان نے لبنانی ریاست کو سخت مشکل میں ڈال دیا ہے۔ بالخصوص جب کہ حزب اللہ کے سکریٹری جنرل نے فرقہ واریت کی بنیاد پر ایران ، عراق ، یمن ، افغانستان اور پاکستان جیسے ممالک سے جنگجوؤں کی اسرائیل کے خلاف جنگ میں شرکت کی بات کی ہے۔

نصر اللہ کی جانب سے لبنان یا شام میں لڑنے کے لیے ہزاروں جنگجوؤں کے تیار رہنے کے اعلان کا صاف مطلب شام ، عراق اور یمن میں فرقہ وارانہ ملیشیاؤں کو قانونی حیثیت دے دینا ہے۔

حزب اللہ کے سکریٹری جنرل کی جانب سے لبنان کو ایک نئی جنگ میں جھونکنے کی کوشش بیروت سمیت چار عرب دارالحکومتوں کے فیصلوں میں ایران کے بڑھتے ہوئے کردار کے حوالے سے انتباہات کی تصدیق کر رہی ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں