.

امریکی فورس شام سے واپس بلانے کا وقت آ گیا ہے: ڈونلڈ ٹرمپ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے منگل کے روز باور کرایا ہے کہ وہ شام سے امریکی فوج کا انخلاء چاہتے ہیں۔ ٹرمپ کا یہ موقف اُن کے زیر صدارت امریکی قومی سلامتی کونسل کے اُس اجلاس سے قبل سامنے آیا ہے جس میں شام کی صورت حال کا جائزہ لیا جائے گا۔

ٹرمپ کا کہنا تھا کہ "میں چاہتا ہوں کہ ہماری فورسز اپنے وطن لوٹ جائیں۔ میں اپنی قوم کی تعمیر نو کا آغاز کرنا چاہتا ہوں"۔ انہوں نے مزید کہا کہ "ہمارا بنیادی مشن داعش تنظیم سے چھٹکارہ حاصل کرنا ہے۔ اس مشن میں ہم تقریبا کامیاب ہو چکے ہیں۔ اب ہم بہت جلد ایک فیصلہ کرنے والے ہیں"۔

ڈونلڈ ٹرمپ نے گزشتہ جمعرات کو اعلان کیا تھا کہ امریکی فوج بہت جلد شام سے کوچ کر جائیں گی۔ شام میں امریکی اسپیشل فورسز داعش تنظیم کے خلاف برسرِ جنگ بین الاقوامی اتحاد میں شامل ہو کر مختلف علاقوں میں تعینات ہیں۔ ٹرمپ نے کہا تھا کہ "ہماری فورسز جلد شام سے کوچ کریں گی اور اس امر کو دیگر فریقوں کے لیے چھوڑ دیا جائے گا۔ ہم نے داعش تنظیم کو سو فی صد ہزیمت سے دوچار کر دیا ہے۔ بڑے پیمانے پر اس کے ارکان کی پسپائی اور فرار دیکھنے میں آیا۔ ہم نے انہیں تیزی سے مات دی"۔