.

حیدر العبادی نے حکومت کی تشکیل کی باضابطہ دعوت نہیں دی: الصدر

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

عراق کے مذہبی سیاسی رہ نما اور ’سائرون‘ نامی سیاسی اتحاد کے سربراہ مقتدیٰ الصدر نے وزیر اعظم حیدر العبادی کی طرف سے حکومت کی تشکیل کے لیے دعوت کے طریقہ کار پر تنقید کی ہے۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق مقتدیٰ الصدر کےدفر کے ایک عہدیدار نے کہا کہ ’النصر‘ اتحاد کے سربراہ اور سبکدوش ہونے والے وزیر اعظم حیدر العبادی کی طرف سے انہیں حکومت کی تشکیل کے لیے باضاطہ دعوت نہیں دی گئی تاہم اخبارات اور میڈیا کے ذریعے ان تک یہ خبر پہنچی ہے۔

الصدر کے سیاسی شعبے کے انچارج ضیاء الاسدی نے کہا کہ العبادی کی طرف سے حکومت کی تشکیل کے لیے سیاسی گروپوں سے بات چیت کی دعوت صرف میڈیا کے ذریعے دی گئی ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ پارلیمنٹ میں اکثریت حاصل کرنے والی سیاسی جماعتوں سے رابطہ اور انہیں حکومت کی تشکیل پر آمادہ کرنے کی کوئی بھی پیش رفت باضابطہ اور سرکاری سطح پر ہونی چاہیے۔ ان کا مزید کہنا تھا کہ جس انداز میں العبادی کی طرف سے حکومت سازی کی دعوت دی گئی ہے اس کا کوئی سنجیدہ جواب نہیں دیا جا سکتا۔